ایشز سیریز: بورتھوک اور جیمز کی سکواڈ میں شمولیت

انگلینڈ کے کھلاڑی گریم سوان کے ریٹائرمنٹ کے اعلان کے بعد آسٹریلیا میں جاری ایشز سیریز کے لیے انگلینڈ نے سکاٹ بورتھ وک اور جیمز ٹریڈول کو ٹیم میں شامل کیا ہے۔

سکاٹ بورتھ وک ڈرہم کی جانب سے کھیلتے ہیں اور وہ لیگ سپنر ہیں جبکہ جیمز ٹریڈول آف سپنر ہیں اور کینٹ کی جانب سے کھیلتے ہیں۔

تئیس سالہ بورتھ وک انگلینڈ کی جانب سے اپنا پہلا ٹیسٹ میچ میلبورن میں کھیل سکتے ہیں لیکن اس میچ کے لیے بائیس ہاتھ سے آہستہ گیند کرنے والے مونٹی پنیسر کے بارے میں کہا جا رہا ہے کہ وہ سوان کی جگہ لیں گے۔

اکتیس سالہ ٹریڈول میلبورن ٹیسٹ کے لیے وقت پر نہیں پہنچ سکیں گے۔ دونوں سپنروں کے بارے میں کہا جا رہا ہے کہ وہ میلبورن ٹیسٹ میں نہیں کھیل سکیں گے۔ تاہم سڈنی میں کھیلے جانے والے ایشز سیریز کے آخری ٹیسٹ میں ان کو ٹیم میں جگہ مل سکتی ہے۔

انگلینڈ پہلے ہی ایشز سیریز ہار چکا ہے۔ آسٹریلیا نے ابھی تک کھیلے گئے تینوں ٹیسٹ میچ جیتے ہوئے ہیں۔ یاد رہے کہ اتوار کو انگلینڈ کے سپن بالرگریم سوان نے تمام قسم کی کرکٹ سے فوری ریٹائرمنٹ کا اعلان کیا تھا۔ 34 سالہ گریم سوان نے آسٹریلیا میں جاری ایشز سیریز میں اب تک صرف سات وکٹیں لی ہیں۔

چونتیس سالہ سوان نے ساٹھ میچوں میں 255 وکٹیں حاصل کی ہیں اور وہ انگلینڈ کی جانب سب سے زیادہ وکٹیں حاصل کرنے والے بالروں کی فہرست میں چھٹے نمبر پر ہیں۔ ٹریڈول نے انگلینڈ کی جانب سے صرف ایک ٹیسٹ کھیلا ہے۔

انہوں نے تین سال قبل بنگلہ دیش کے خلاف میچ کھیلا تھا۔ اس کے علاوہ انہوں نے چوبیس ایک روزہ اور سات ٹی ٹوئنٹی میچ کھیلیں ہیں۔وہ پہلے ہی آسٹریلیا کے خلاف ایک روزہ میچوں کی سیریز کے لیے آسٹریلیا جا رہے تھے۔ تاہم اب ان کو جلدی بلا لیا گیا ہے۔انگلینڈ اور آسٹریلیا کے مابین ایک روزہ سیریز بارہ جنوری سے شروع ہو گی۔

دوسری جانب بورتھوک نے 2011 میں دو ایک روزہ اور ایک ٹی ٹوئنٹی میں انگلینڈ کی نمائندگی کی تھی۔آسٹریلیا کے خلاف ہونے والے آخری دو ٹیسٹ میچوں میں مونٹی پنیسر کے ٹیم میں شامل ہونے کے امکانات زیادہ ہیں۔

انگلینڈ کے سابق کپتان جیف بائیکاٹ مونٹی کے ٹیم میں شامل کے حق میں ہیں لیکن سوان کا کہنا ہے کہ بورتھوک ٹیم کے لیے زیادہ بہتر رہیں گے۔