میلبرن ٹیسٹ: انگلینڈ کو ایک اور شکست کا سامنا

Image caption حالیہ ایشز میں آسٹریلیا کو ناقابل تسخیر تین صفر کی برتری حاصل ہے

میلبرن میں کھیلے جانے والے ایشز سیریز کے چوتھے ٹیسٹ میچ کے تیسرے دن کھیل کے اختتام پر آسٹریلیا نے انگلینڈ کے خلاف دوسری اننگز میں بغیر کسی نقصان کے 30 رنز بنائے ہیں۔

آسٹریلیا کو یہ میچ جیتنے کے لیے مزید 201 رنز کی ضرورت ہے اور دوسری اننگز میں اس کی تمام وکٹیں باقی ہیں۔

تیسرے دن کھیل کے اختتام پر کرس راجرز اور ڈیوڈ وارنر کریز پر موجود تھے اور دونوں نے بالترتیب 18 اور 12 رنز بنائے تھے۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

سنیچر کو میچ کے تیسرے دن انگلینڈ کی پوری ٹیم دوسری اننگز میں 179 رنز بنا کر آؤٹ ہوگئی تھی اور اس نے آسٹریلیا کو

جیتنے کے لیے 231 رنز کا ہدف دیا تھا۔

انگلینڈ کی جانب سے ایلسٹر کک اور مائیکل کاربیری نے دوسری اننگز کا آغاز کیا۔

انگلینڈ کا آغاز اچھا نہ تھا اور صرف 87 رنز کے مجموعی سکور پر اس کے چار کھلاڑی پویلین لوٹ گئے۔

ایک موقع پر کیون پیٹرسن اور بیر سٹو نے چھٹی وکٹ کی شراکت میں 42 رنز کا اضافہ کیا۔

انگلینڈ کی جانب سے دوسری اننگز میں ایلسٹر کک نے 51 جب کہ کیون پیٹرسن نے 49 رنز بنائے۔

انگلینڈ کے پانچ بلے بازوں کا ہدف دوسرے ہندے میں نہ پہنچ سکا۔

آسٹریلیا کی جانب سے دوسری اننگز میں نیتھن لیون نے پانچ، مچل جانس نے تین اور پیٹر سڈل نے ایک کھلاڑی کو آؤٹ کیا۔

Image caption میچل جانسن نے سیریز میں ایک بار پھر عمدہ بولنگ کا مظاہرہ کیا اور پانچ وکٹ لیے

اس سے پہلے آسٹریلیا کی جانب سے بریڈ ہینڈن اور نیتھن لیون نے تیسرے دن کا آغاز کیا۔

دونوں بلے بازوں نے آخری وکٹ کی شراکت میں 40 رنز نے آسٹریلیا کو سخت مشکلات سے نکالنے میں اہم کردار ادا کیا۔

آسٹریلیا کی پوری ٹیم پہلی اننگز میں 204 رنز بناکر آؤٹ ہو گئی تھی اور یوں انگلینڈ کو آسٹریلیا کے خلاف پہلی اننگز میں 51 رنز کی اہم سبقت حاصل ہوئی تھی۔

آسٹریلیا کی جانب سے پہلی اننگز میں وکٹ کیپر بریڈ ہیڈن نے سب سے زیادہ 65 رنز بنائے اور وہ آؤٹ ہونے والے آخری کھلاڑی تھے۔

انگلینڈ کی جانب سے پہلی اننگز میں جیمز اینڈرسن نے چار جب کہ سٹوارٹ براڈ نے تین وکٹیں لیں۔

اس سے قبل انگلینڈ نے پہلی اننگز میں 255 رنز بنائے تھے۔

جمعرات کو شروع ہونے والے ٹسیٹ میچ میں آسٹریلیا نے ٹاس جیت کر انگلینڈ کو بیٹنگ کی دعوت دی تھی۔

آسٹریلیا میں جاری ایشز سیریز میں میزبان ٹیم کو مہمان ٹیم کے خلاف تین صفر کی فیصلہ کن برتری حاصل ہے۔

اسی بارے میں