بھارت کو نہ ہرانے کا جمود ٹوٹے گا؟

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption ۔۔آئی سی سی ورلڈ ٹی ٹوئنٹی کا آغاز ہی ایک ایسے میچ سے ہو رہا ہے جو پرفیشنلزم اور کمرشلزم کی بلندیوں کو چھوتا ہے

پاکستانی کرکٹ ٹیم آئی سی سی کے ہر عالمی مقابلے میں بھارت کو ہرانے کی امید کے ساتھ آتی ہے لیکن ہر مقابلے میں یہ امید دم توڑ جاتی ہے اور اسے ایک نئے انتظار کے کرب میں مبتلا ہونا پڑتا ہے۔ اسے یہ انتظار کرتے ہوئے بائیس سال ہوچکے ہیں اور اب پھر وہ اسی امید کے سہارے آئی سی سی ورلڈ ٹی ٹوئنٹی کے افتتاحی میچ میں بھارت کے مدمقابل ہونے والی ہے۔

بنگلہ دیش میں منعقدہ آئی سی سی ورلڈ ٹی ٹوئنٹی کا آغاز ہی ایک ایسے میچ سے ہو رہا ہے جو کھیل کے دونوں تقاضوں یعنی پرفیشنلزم اور کمرشلزم کی بلندیوں کو چھوتا ہے۔

یہ میچ میرپور کے شیر بنگلہ سٹیڈیم میں جمعہ کے روز کھیلا جا رہا ہے ۔یہ وہی سٹیڈیم ہے جہاں چند ہفتے پہلے پاکستان نے بھارت کو ایشیا کپ کے میچ میں سنسنی خیز مقابلے کے بعد ایک وکٹ سے شکست دی تھی لیکن پاکستان آئی سی سی کے عالمی مقابلوں میں بھارت کو نہ ہرانے کا جمود نہیں توڑ سکا ہے۔

پاکستان اور بھارت کے درمیان آئی سی سی ورلڈ ٹی ٹوئنٹی مقابلوں میں یہ چوتھا میچ ہے۔ اس سے قبل کھیلے گئے تینوں میچوں میں بھارت نے کامیابی حاصل کی ہے۔

دونوں ٹیموں کے درمیان اسی عالمی ایونٹ کے گروپ میں بھی مقابلہ ہوا تھا اور وہ میچ ٹائی ہوگیا تھا جس کے بعد بھارت نے بول آؤٹ کی بنیاد پر کامیابی حاصل کی تھی۔ اس میچ میں بھی مصباح الحق نے عمدہ بیٹنگ کرتے ہوئے نصف سنچری سکور کی تھی لیکن آخری گیند پر فتح کے لیے درکار دو رنز نہیں بناسکے تھے۔

پاکستان اور بھارت کے درمیان ٹی ٹوئنٹی مقابلوں میں تیسرا میچ 2012ء میں کولمبو میں کھیلا گیا تھا جس میں پاکستان کو آٹھ وکٹوں سے شکست ہوئی تھی۔اس میچ میں ویراٹ کوہلی نے ناقابل شکست اٹھہتر رنز سکور کیے تھے۔

پاکستان اور بھارت آئی سی سی ورلڈ کپ میں بھی پانچ مرتبہ مدمقابل ہوچکے ہیں اور یہ تمام میچز بھی پاکستان کی شکست پر منتج ہوئے ہیں۔

دونوں کے درمیان پہلی بار مقابلہ انیس سے بانوے کے عالمی کپ میں ہوا تھا جس میں بھارت تینتالیس رنز سے جیتا تھا جس کےبعد انیس سو چھیانوے میں انتالیس رنز انیس سو ننانوے میں سینتالیس رنز دوہزارتین میں چھ وکٹ اور دو ہزار گیارہ میں انتیس رنز سے پاکستان ہارا۔

پاکستان نے بھارت کو صرف آئی سی سی چیمپینز ٹرافی میں دو مرتبہ شکست دے رکھی ہے ۔

اسی بارے میں