بنگلہ دیشں میں غیر ملکی پرچموں پر پابندی

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption بہت سے بنگلہ دیشی شہری پاکستان کے پرچم لے کر سٹیڈیم میں آتے ہیں

بنگلہ دیش میں جاری ٹی ٹوئنٹی ٹورنامنٹ کے دوران بنگلہ دیشی حکام نے بنگلہ دیشی شہریوں پر میچوں کے دوران غیر ملکی ٹیموں کے پرچموں کے ساتھ میدانوں میں آنے پر پابندی لگا دی ہے۔

بنگلہ دیشی کرکٹ بورڈ کے ڈائریکٹر اسماعیل حیدر نے مقامی اخباروں کے نمائندوں کو بتایا ہے کہ یہ پابندی صرف بنگلہ دیشی شہریوں پر لگائی گئی ہے اور صرف انھیں ہی میچوں کے دوران غیر ملکی جھنڈے لے کر میدان میں آنے کی اجازت نہیں ہو گی۔

انھوں نے اس فیصلے کی وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ یہ فیصلہ صرف اور صرف سکیورٹی وجوہات کی بنا پر کیا گیا ہے۔

فرانسیسی خبررساں ادارے اے ایف پی کے مطابق بنگلہ دیشی حکام نے کہا ہے کہ کسی بھی بنگلہ دیشی شہری کو کسی غیر ملکی ٹیم کے پرچم کے ساتھ سٹیڈیم میں جانے کی اجازت نہیں ہو گی۔

اے ایف پی کے مطابق حال ہی میں ہونے والے ایشیا کپ کے دوران بنگلہ دیشی شہریوں کی بڑی تعداد پاکستان کے جھنڈوں سمیت سٹیڈیم میں موجود تھی جس پر ملک کے اندر کئی حلقوں کی جانب سے زبردست تنقید کی گئی۔

بنگلہ دیشی کرکٹ بورڈ کے ایک ترجمان نے کہا کہ حالیہ میچوں کے دوران مقامی لوگوں کو غیر ملکی جھنڈے اٹھائے دیکھا گیا تھا جو کہ قومی پرچم کے بارے میں قواعد کی خلاف ورزی ہے۔

بورڈ کے حکام کا کہنا ہے اس بارے میں انھیں ہدایات بھی موصول ہوئی تھیں۔ انھوں نے کہا سٹیڈیم کے باہر تعینات سکیورٹی حکام کو واضح ہدایات جاری کی گئی ہیں کہ وہ کسی بھی مقامی شخص کو غیر ملکی جھنڈے لے کر سٹیڈیم میں داخل ہونے کی اجازت نہ دی جائے۔

واضح رہے کہ یہ پابندی بنگلہ دیش کے چوالیسویں یوم آزادی کے موقع پر لگائی گئی ہے۔ چوالیس سال قبل اس دن بنگلہ دیشی قوم نے پاکستان کے خلاف جنگ شروع کی تھی۔

اسی بارے میں