2016 کے ریو اولمپکس کی تیاریاں ’غیر معیاری‘

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption برازیل میں کچھ جگہوں پر مقررہ تعمیراتی کام ابھی تک شروع بھی نہیں ہوا: جان کوٹس

انٹرنیشنل اولمپک کمیٹی کے نائب صدر جان کوٹس نے 2016 میں برازیل کے شہر ریو ڈی جنیرو میں منعقد ہونے والے اولمپکس کھیلوں کی تیاریوں کو ’غیر معیاری‘ قرار دیا ہے۔

کوٹس کا کہنا ہے کہ ’برازیل میں تیاریوں کے حوالے سے حالات تشویش ناک ہیں اور کمیٹی کے پاس کوئی دوسرا منصوبہ موجود نہیں ہے۔‘

جان کوٹس کا تعلق آسٹریلیا سے ہے اور وہ اِس سے قبل سنہ 2000 میں سڈنی اولمپکس کی کمیٹی کے بھی سربراہ رہ چکے ہیں۔

کوٹس نے کہا ہے کہ انھوں نے اس سے بری تیاریاں آج تک نہیں دیکھیں اور’اس وقت کوئی بھی کچھ بتانے کے قابل نہیں ہے۔‘

40 سال سے اولمپک کمیٹی کے ساتھ کام کرنے والے کوٹس کے مطابق آئی او سی نے اس سلسلے میں ’غیرمعمولی‘ اقدام کرتے ہوئے مقامی آرگنائزنگ کمیٹی کو ماہرین کی خدمات فراہم کی ہیں تاکہ کھیلوں کا انعقاد وقت پر ہو سکے۔

کوٹس نے بتایا کہ برازیل میں تیاریوں کے حوالے صورتِ حال 2004 میں ہونے والے ایتھنز اولمپکس سے بھی بدتر ہے جب تعمیراتی کام مکمل نہ ہونے کی وجہ سے کھیلوں کے التوا کا خطرہ تھا۔

انھوں نے مزید کہا کہ برازیل میں کچھ جگہوں پر مقررہ تعمیراتی کام ابھی تک شروع بھی نہیں ہوا اور اس کے علاوہ کمیٹی کو ملک میں معاشرتی مسائل کا سامنا بھی ہے۔

ریو میں ہونے والے اولمپکس کی مقامی کمیٹی میں اس وقت 600 افراد کو تعمیراتی اور انتظامی ذمہ داریاں سونپی گئی ہیں لیکن کوٹس کا کہنا ہے کہ تعینات کیے گئے لوگوں کے پاس ضروری تجربہ نہیں ہے۔

یاد رہے کہ برازیل اس سال فٹبال کے ورلڈ کپ کی میزبانی بھی کر رہا ہے جس کے آغاز میں چھ ہفتے کا وقت بچا ہے اور فٹبال کے نگراں اِدارے فیفا کا کہنا ہے کہ دو سٹیڈیموں کا تعمیراتی کام ابھی مکمل نہیں ہوا۔

اسی بارے میں