پاکستان عالمی فٹ بال کپ 2014 میں

Image caption برازیل میں ہونے والے فٹبال کے عالمی مقابلے کا سرکاری گیند ’برازوکا‘ ایک خاص گیند ہے جس کی ڈیزائنگ میں خوبصورتی کے ساتھ ساتھ تکنیکی پہلوں کا بھی خیال رکھا گیا ہے

ایک زمانے میں سیالکوٹ دنیا بھر میں استعمال ہونے والے 70 فیصد فٹ بال بنا رہا تھا لیکن پھر بچوں سے جبری مشقت کے الزامات نے اس صنعت کو متاثر کیا۔

لیکن اب تقریباً دس برس بعد سپورٹس کی اشیا بنانے والی ملٹی نیشنل کمپنی ’ایڈیڈاس‘ نے ’برازوکا‘ بنانے کا کنٹریکٹ ایک پاکستانی کمپنی کو بھی دیا۔

سیالکوٹ کے فٹ بال عالمی کپ میں: تصاویر

’ورلڈ کپ مقابلے کی آفیشل فٹ بال برازوکا‘ کی تیاری کا اعزاز ایک عرصے سے چین کو حاصل تھا اور اب اس میں پاکستان بھی شامل ہے۔

پاکستان میں ایڈیڈاس کے سورسنگ ڈائریکٹر عزیز الرحمان کہتے ہیں’یہ کوئی حیرت انگیز بات نہیں۔ یہ کمپنی یورپین لیگز کے علاوہ کئی اور بہت معروف ٹورنامنٹس کے لیے ایڈیڈاس کے گیند بنا رہی تھی اور جب گذشہ برس برازوکا کے آرڈر ہماری کمپنی کی توقع سے بہت زیادہ ہونے لگے اور چین میں ہماری ساتھی کمپنی کے لیے اس ڈیمانڈ کو پورا کرنا ممکن نہ رہا تو قدرتی انتخاب پاکستان کی فارورڈ سپورٹس کمپنی ہی تھی۔‘

برازیل میں ہونے والے فٹبال کے عالمی مقابلے کا سرکاری گیند ’برازوکا‘ ایک خاص گیند ہے جس کی ڈیزائنگ میں خوبصورتی کے ساتھ ساتھ تکنیکی پہلوؤں کا بھی خیال رکھا گیا ہے۔ عام طور پر فٹبال چمڑے کے 32 ٹکڑوں کو جوڑ کر بنایا جاتا ہے لیکن برازوکا میں صرف چھ پینلز ہیں جو اسے انتہائی گول بناتے ہیں۔

کمپنی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر خواجہ مسعود اختر کے مطابق ’یہ صرف میرے لیے اور میری ٹیم کے لیے ہی نہیں بلکہ میرے ملک کے لیے انتہائی فخر کی بات ہے اور سب لوگ بہت خوش ہیں۔ ہم نے برازوکا کی تیاری میں بہت محنت کی ہے اور یہ مکمل طور پر ایک نئی طرح کی گیند ہے۔‘

پہلے تو زیادہ تر فٹبال ہاتھ سے بنائے جاتے تھے لیکن ان فٹبالز کو بنانے کے لیے ایک جدید تکنیک تھرمو بونڈنگ کا استعمال کیا گیا ہے۔

برازوکا کو سلائی کی بجائے چمڑے پر گوند لگا کر اور حرارت دے کر جوڑا گیا ہے۔ گیند بنانے کے لیے مشینں اور سافٹ وئیرز بھی پاکستانی انجینیئرز نے تیار کیے ہیں۔

اس گیند کی تیاری میں خواتین ورکرز بھی بڑھ چڑھ کر شریک رہیں۔

شکیلہ اشرف اس بات پر بہت خوش ہیں کہ ان کے ہاتھوں سے بننے والے گیند دنیا کے سب سے بڑے ٹورنامنٹ استعمال ہوں گے۔

’ہم نے اس گیند کو بنانے کے لیے دن رات بہت محنت کی ہے۔ ہمیں بہت فخر ہے کہ یہ گیند ورلڈکپ میں استعمال ہوگی۔ بڑے بڑے کھلاڑی اس سے کھیلیں گے۔ میں ضرور اپنے ہاتھ سے بنےگیند دیکھنے کے لیے ورلڈ کپ میچز دیکھوں گی۔‘

عالمی کپ کا مقابلہ برازیل میں ہو رہا ہے۔ اس میں استعمال ہونے والے سرکاری گیند کو برازوکا کا نام دیا گیا ہے جس کے معنی ہیں برازیلی۔ یہ نام برازیل میں ہونے والے ایک عوامی ووٹ کے بعد رکھا گیا۔ جس میں تقریباً دس لاکھ لوگوں نے حصہ لیا۔ گیند کے رنگوں میں شامل سبز رنگ برازیلی پرچم کے رنگوں سے لیا گیا ہے۔

برازوکا کو اڑھائی برس تک ٹیسٹ کیا گیا ہے۔ لیبارٹریوں کے علاوہ دنیا بھر میں 40 ٹیموں کے 600 کھلاڑیوں نے اس سے تجرباتی طور پر استعمال کیا جن میں میسی جیسے نامور ستارے بھی شامل ہیں۔

اسی بارے میں