پاکستانی نژاد معین علی انگلش ٹیسٹ ٹیم میں

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption معین علی اس سے پہلے انگلینڈ کی جانب سے ویسٹ انڈیز کے خلاف تین ایک روزہ میچ کھیل چکے ہیں

انگلینڈ اور ویلز (ای سی بی) کرکٹ بورڈ نے سری لنکا کے خلاف 12 جون سے شروع ہونے والی ٹیسٹ سیریز کے لیے سکواڈ کا اعلان کر دیا ہے۔

ای سی بی نے پہلی بار تین نئے کھلاڑیوں کرس جورڈن، سیم روبسن اور معین علی کو ٹیسٹ ٹیم میں شامل کیا ہے۔

انگلینڈ اور سری لنکا کے مابین ایک روزہ میچوں کی سیریز میں 25 سالہ کرس جورڈن نے 12 وکٹیں حاصل کیں۔

کرس جورڈن کے علاوہ انگلینڈ نے پاکستانی نژاد معین علی کو بھی ٹیسٹ سکواڈ میں شامل کیا ہے۔ معین علی اس سے پہلے انگلینڈ کی جانب سے ویسٹ انڈیز کے خلاف تین ایک روزہ میچ کھیل چکے ہیں۔

برمنگھم میں پیدا ہونے والے معین علی ووسٹرشائر کی جانب سے کھیلتے ہیں۔ وہ مڈل آرڈرل بلے باز اور آف سپن بولر ہیں۔

خیال رہے کہ معین علی کو گذشتہ سیزن میں عمدہ کارکردگی کا مظاہرہ کرنے پر پروفیشنل کرکٹرز ایسوسی ایشن کے طرف سے ’پلیئر آف دی ایئر‘ کا اعزاز دیاگیا تھا۔

مڈل سیکس کی جانب سے کھیلنے والے 24 سالہ اوپنگ بلے باز سیم روبسن نے رواں سیزن کے دوران 51 رنز کی اوسط سے رنز بنائے ہیں۔

وکٹ کیپر میٹ پرائر بھی برطانوی ٹیم میں جگہ بنانے میں کامیاب رہے ہیں جب کہ فاسٹ بولر لیام پلنکٹ سات سال کے طویل وقفے کے بعد ٹیم میں شامل کیے گئے ہیں۔

لیام پلنکٹ نے رواں سیزن کے دوران یارک شائر کی جانب سے کھیلتے ہوئے 24 رنز کی اوسط سے 24 وکٹیں حاصل کی۔

ڈرہم کی جانب سے کھیلنے والے آل راؤنڈر بین سٹوکس ٹیم میں جگہ نہیں بنا پائے۔ ان کے علاوہ مائیکل کاربیری، جونی بیر سٹو، سکاٹ بورتھوک اور بوائڈ رینکن کو بھی ڈراپ کر دیا گیا ہے۔

سری لنکا کے خلاف حالیہ ایک روزہ میچوں کی سیریز میں کسی بھی برطانوی کھلاڑی کی جانب سے تیز ترین سنچری بنانے والےجوس بٹلر بھی ٹیم میں جگہ بنانے میں ناکام رہے ہیں۔

اسی بارے میں