کنگسٹن ٹیسٹ: نیوزی لینڈ کی برتری 260 رنز

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption نیوزی لینڈ کو ویسٹ انڈیز کے خلاف 260 رنز کی برتری حاصل ہے اور دوسری اننگز میں اس کی آٹھ وکٹیں باقی ہیں

کنگسٹن میں کھیلے جانے والے پہلے ٹیسٹ میچ کے تیسرے دن کے اختتام پر نیوزی لینڈ نےدوسری اننگز میں دو وکٹوں کے نقصان پر 14 رنز بنائے ہیں۔

نیوزی لینڈ کو ویسٹ انڈیز کے خلاف 260 رنز کی برتری حاصل ہے اور دوسری اننگز میں اس کی آٹھ وکٹیں باقی ہیں۔

تیسرے دن کھیل کے اختتام پر کریز پر ٹام لیتھن اور ایش ساؤدی موجود تھے اور دونوں نے بالترتیب آٹھ اور چار رنز بنائے تھے۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

ویسٹ انڈیز کی جانب سے کرس گیل اور کیرن پاول نے تیسرے دن کے کھیل کا آغاز کیا۔

دونوں بلے بازوں نے پہلی وکٹ کی شراکت میں 60 رنز بنائے۔

ویسٹ انڈیز کے بلے باز محتاط آغاز کے باجوو اچھی بیٹنگ کا مظاہرہ نہ کر سکے اور ان کی وکٹیں وقفے وقفے سے گرتی ہیں۔

ویسٹ انڈیز کی جانب سے چندر پال نے 13 چوکوں کی مدد سے 84 جب کہ کرس گیل نے 11 چوکوں کی مدد سے 64 رنز بنائے۔

ویسٹ انڈیز کے پانچ بلے بازوں کا سکور دوہرے ہندسے میں نہ پہنچ سکا اور پوری ٹیم 262 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئی۔

نیوزی لینڈ کی جانب سے پہلی اننگز میں ٹم ساؤدی اور مارک گریگ نے چار چار کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔

اس سے پہلے کھیل کے دوسرے دن نیوزی لینڈ کی ٹیم نے آٹھ وکٹوں کے نقصان پر اپنی پہلی اننگز ڈکلئیر کر دی تھی۔

نیوزی لینڈ کی اننگز کی خاص بات کین ویلمسن اور جمی نیشم کی شاندار سنچریاں تھیں۔

دونوں بلے بازوں نے بالترتیب 113 اور 107 رنز کی عمدہ اننگز کھیلی۔

ویسٹ انڈیز کی جانب سے سلمان بین اور شین شلنگفرڈ نے تین تین کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔

نیوزی لینڈ کی جانب سے ٹام لیتھن اور پیٹر فلٹن نے اننگز کا آغاز کیا۔

نیوزی لینڈ کا آغاز اچھا نہ تھا اور صرف نو رنز کے مجموعی سکور پر پیٹر فلٹن ایک رن بنا کر آؤٹ ہو گئے۔

ابتدائی نقصان کے بعد نیوزی لینڈ کے بلے بازوں نے عمدہ بیٹنگ کا مظاہرہ کیا اور دوسری وکٹ کی شراکت میں 165 رنز کا اضافہ کیا۔

دونوں ٹیموں کے درمیان تین ٹیسٹ اور دو ٹی ٹوئنٹی میچ کھیلے جائیں گے۔

اسی بارے میں