دفاعی چیمپیئن سپین کا ورلڈ کپ پہلے ہی راؤنڈ میں ختم

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption ہسپانوی ٹیم کھیل کے ابتدائی مراحل سے ہی کمزور نظر آئی

برازیل میں فٹبال کے ورلڈ کپ کی دفاعی چیمپیئن سپین کی ٹیم چلی کے ہاتھوں شکست کے بعد پہلے ہی راؤنڈ میں عالمی مقابلے سے باہر ہوگئی ہے۔

چلی نے ریو ڈی جنیرو کے ماراکانا سٹیڈیم میں کھیلے گئے میچ میں سپین کو صفر کے مقابلے دو گول سے شکست دی۔

فٹبال ورلڈ کپ پر خصوصی ضمیمہ

عالمی مقابلوں کی تاریخ میں یہ پانچواں موقع ہے کہ دفاعی چیمپیئن کا سفر پہلے ہی راؤنڈ میں تمام ہوگیا ہے۔

اس ٹورنامنٹ میں سپین کو اپنے پہلے میچ میں ہالینڈ کے ہاتھوں پانچ ایک سے شکست ہوئی تھی اور وہ اس کے اثر سے نکل ہی نہ پائی۔

بدھ کو سپین کے خلاف میچ میں پہلا ہاف شروع ہوتے ہی چلی نے جارحانہ کھیل کا مظاہرہ کیا اور پہلے ہی منٹ میں ہسپانوی گول پر حملہ کیا لیکن گول نہ ہو سکا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption ایڈوارڈو وارگوس نے چارلس اورنگوئز کے پاس پرگول کر کے چلّی کو برتری دلوائی

سپین کو گول کرنے کا پہلا موقع 14 ویں منٹ میں ملا لیکن زابی الونزو کی شاٹ سب کے سر کے اوپر سے ہوتی ہوئی باہر چلی گئی۔

ہسپانوی ٹیم کھیل کے ابتدائی مراحل سے ہی کمزور نظر آئی اور کھلاڑیوں کے کھیلنے کے انداز سے تھکن نمایاں تھی۔

چلی کی ٹیم جسے سٹیڈیم میں موجود ہزاروں شائقین کی حمایت بھی حاصل تھی اس جوش اور ولولے سے کھیلی جو ہسپانوی ٹیم میں کہیں دکھائی نہ دیتا تھا۔

19ویں منٹ میں جب ایڈوارڈو وارگوس نے چارلس اورنگوئز کے پاس پرگول کر کے چلّی کو برتری دلوائی تو اس کے بعد چلی کی ٹیم نے پیچھے مڑ کر نہ دیکھا۔

چلی کے کھلاڑیوں نے ہسپانوی گول پر لگاتار حملے کیے جن کا پھل انھیں پہلا ہاف ختم ہونے سے چند منٹ قبل اس وقت ملا جب چلی کے ارانگوئز نےگول کر کے اپنی ٹیم کی برتری دوگنی کر دی۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption ہسپانوی کیپر اور کپتان آئیکر کیسیئس نے اس ٹورنامنٹ میں دو میچوں میں سات گول کروائے

یہ گول ایک مرتبہ پھر ہسپانوی کیپر اور کپتان آئیکر کیسیئس کی غلطی کا نتیجہ تھا جنھوں نے اس ٹورنامنٹ میں دو میچوں میں سات گول کروائے۔

دوسرے ہاف میں ابتدا میں تو سپین کی ٹیم بہتر کھیلی اور پہلے 15 منٹ میں دو خطر ناک حملے کیے لیکن ڈیاگو کوسٹا اور سرجیو گول کرنے میں ناکام رہے۔

جیسے جیسے دوسرا ہاف اختتام کی جانب بڑھا ہسپانوی کھلاڑیوں کے ہمت ہار جانے کے ثبوت سامنے آتے گئے اور چھ منٹ کے اضافی وقت کے اختتام کے ساتھ ہی سپین کا ورلڈ کپ بھی ختم ہوگیا۔

خیال رہے کہ یہ کسی بھی ورلڈ کپ حتی کہ کسی انٹرنیشنل میچ میں بھی چلی کی سپین کے خلاف پہلی فتح ہے۔

اسی بارے میں