رونالڈو کے نئے ہیئر سٹائل کے بارے میں افواہیں

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption امریکہ کے خلاف میچ میں رونالڈو کے ایک پاس پر کیے جانے والے گول نے ورلڈ کپ میں پرتگال کی امید اب تک برقرار رکھی ہے

پرتگال کے سٹار فٹبالر کرستیانو رونالڈو کے نئے ہیئر سٹائل کے بارے میں ہزاروں ٹویٹس کی گئی ہیں اور لوگوں نے کینسر سے متاثر ایک بچے کے لیے ان کے جذبے کی تعریف کی ہے۔

لیکن کیا واقعی انھوں نے کسی بچے کے لیے ایسا کیا ہے یا یہ ٹوئٹر پر صرف ایک افواہ ہی ہے؟

واضح رہے کہ برازیل میں پرتگال کی ٹیم کی سربراہی کرنے والے رونالڈو یوں تو اکثرو بیشتر خبروں میں رہتے ہیں تاہم گذشتہ اتوار سے وہ اپنے کھیل کے بجائے اپنے بالوں کے نئے انداز کے لیے سوشل میڈیا پر گفتگو کا مرکز ہیں۔

انھوں نے اپنے سر کے داہنے حصے کے بال پر زیڈ کی شکل میں ترچھے بال ترشوائے ہیں۔

جب امریکہ کے خلاف میچ سے چند گھنٹے قبل وہ اپنے بالوں کے نئے انداز میں عوام کے سامنے آئے تو ٹوئٹر پر لوگ اپنا سر کھجانے لگے۔

کسی نے کہا کہ اسے ورلڈ کپ کے بدترین بالوں کے سٹائل میں شمار کیا جانا چاہیے جبکہ بعض لوگ یہ سوچ رہے تھے کہ کہیں یہ نئے انداز میں عدد سات (7) تو نہیں لکھا گیا ہے جیسے کہ گھانا کے کھلاڑی آساموا جان نے تین (3) کو اپنے بالوں پر ڈائی کرا رکھا ہے۔

بہت سے لوگوں نے اسے جادوگر کے نشان سے تعبیر کیا۔ کسی نے لکھا: ’رونالڈو کے بالوں کو کیا ہوا، کہیں اسے ہیری پوٹر نے تو سپانسر نہیں کیا یا پھر کچھ اور ہی ماجرا ہے؟‘

لیکن کچھ ہی دیر بعد ان کے بالوں کا جو مذاق اڑایا جا رہا تھا بطور خاص امریکی شہریوں کی جانب سے، اس میں یکایک تبدیلی آگئی اور ٹوئٹر پر افواہوں کا بازار گرم ہو گیا۔

ایسا لگتا ہے کہ ایک فٹبال فین کی ایک ٹویٹ نے یہ کارنامہ انجام دیا جس کے تقریباً 900 فالوورز ہیں۔ اس نے لکھا: ’رونالڈو نے اپنے بال اس انداز میں اس لیے کٹوائے کہ وہ اپنے ایک نوجوان مداح کے اس نشان سے مشابہت چاہتے تھے جس کے دماغ میں رسولی تھی اور اسے گذشتہ ہفتے آپریشن کر کے نکالا گیا ہے۔‘

اس ٹویٹ کو اب تک 11 ہزار بار سے زیادہ شیئر کیا جا چکا ہے اور اسے لفظ بہ لفظ نقل کر کے بہت سے لوگوں نے اپنے اکاؤنٹس سے ری پوسٹ کیا۔ مجموعی طور پر اس کے متعلق 50 ہزار سے زیادہ ٹویٹس اور ری ٹویٹس ہو چکی ہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ
Image caption فلوریڈا کے نک بیرٹ نے اپنی تصویر انٹرنیٹ پر ڈالتے ہوئے کہا کہ اگر رونالڈو کے ہیئر سٹائل سے اس بیماری سے متعلق بیداری پیدا ہو تو یہ بڑی بات ہے

یہاں مسئلہ یہ ہے کہ اسے افواہ ثابت کرنے کے لیے بھی کوئی شواہد نہیں ہیں اور رونالڈو نے اتوار سے اپنے سوشل میڈیا پر کچھ بھی پوسٹ نہیں کیا ہے اور نہ ہی ان کے ایجنٹ یا پرتگال کی ٹیم نے اس بارے میں کوئی وضاحت دی ہے۔

بہر حال ایسا لگتا ہے کہ چند ماہ قبل رونالڈ نے ایک بچے کے دماغ کی سرجری کے لیے رقم دی تھی۔ اس بچے کو دماغی بیماری تھی جس کی وجہ سے اسے مرگی کے دورے پڑتے تھے۔ میڈیا میں یہ بات وسیع پیمانے پر سامنے آئی تھی اور پہلی ٹویٹ میں امریکی اخبار یو ایس اے ٹوڈے کے اس سے متعلق ایک مضمون سے لی گئی تصویر ڈالی گئی تھی۔ لیکن کیا رونالڈو کے بال کے نئے انداز کو اس بات سے یا برین ٹیومر یا پھر کسی چیز سے کچھ سروکار ہے یا نہیں یہ کوئی نہیں بتا سکتا۔

اب اس افواہ میں کوئی صداقت ہے یا نہیں لیکن فلوریڈا کے 29 سالہ نک بیرٹ نے جن کی آٹھ ماہ قبل دماغ کی سرجری ہوئی ہے، انھوں نے اپنے سر کی سرجری کے بعد کی تصویر پوسٹ کی اور بی بی سی کو بتایا کہ انٹرنیٹ پر جاری اس بحث نے ان کی یاد تازہ کر دی ہے: ’جب آپ زخم کے اس نشان کے ساتھ چلتے ہیں تو سب آپ کو دیکھتے ہیں۔ اگر یہ اس بیماری کے بارے میں لوگوں میں آگہی پیدا کرے تو یہ ہیئر سٹائل کافی ہے۔‘

اسی بارے میں