انگلینڈ اور بھارت کا پہلا ٹیسٹ میچ ڈرا

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption کپتان الیئسٹر کک کی بولنگ بھی انگلینڈ کو فتع نہیں دلا سکی۔

انگلینڈ اور بھارت کے درمیان کھیلا جانے والا پہلا کرکٹ ٹیسٹ ہار جیت کے فیصلے کے بغیر ختم ہوگیا ہے۔

نوٹنگھم میں کھیلے جانے والے میچ کے آخری دن ایک موقع پر ایسا لگا کہ انگلینڈ بھارت کو کم سکور پر آؤٹ کر کے میچ کو نتیجہ خیز بنا سکتا ہے لیکن بھارت کے لوئر آرڈر نے ایک مرتبہ پھر اچھی بیٹنگ کی اور میچ ڈرا کر لیا۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

بھارت نے اتوار کو تین وکٹوں کے نقصان پر 167 رنز سے اننگز دوبارہ شروع کی اور سکور میں صرف 17 رنز کے اضافے پر اسے مزید تین وکٹیں کھونا پڑیں۔

184 کے مجموعی سکور پر بھارت کے چھ کھلاڑی آؤٹ ہو چکے تھے تاہم اس موقع پر سٹورٹ بنی نے بھوونیشور کمار کے ساتھ مل کر اپنی ٹیم کو مشکلات سے نکالا۔

بنی نے 78 قیمتی رنز بنائے جبکہ ان کا ساتھ بھوونیشور کمار نے 63 رنز بنا کر دیا۔

ان دونوں نے آٹھویں وکٹ کے لیے 91 رنز کی شراکت قائم کی۔

جب بھارت نے دوسری اننگز نو کھلاڑیوں کے نقصان پر 391 رنز بنا کر ختم کی تو میچ بھی ختم کرنے کا فیصلہ کر لیا گیا۔

انگلینڈ کے بولرز نے کھیل کے آخری لمحات میں وکٹیں لینے کی سر توڑ کوشش کی۔ یہاں تک کہ انگلینڈ کے کپتان الیسٹر کک نے پہلی بار بولنگ کرنے کی ٹھانی اور انہیں اس کوشش میں ایشانت شرما کی وکٹ تو ملی لیکن تب تک بہت دیر ہو چکی تھی۔

انگلینڈ اب لگاتار نو ٹیسٹ میچوں میں فتح کا ذائقہ نہیں چکھ سکا ہے۔

اس ٹیسٹ میں بھارت نے پہلی اننگز میں 457 رنز بنائے تھے جس کے جواب میں انگلینڈ نے 496 رنز بنا کر 39 رنز کی برتری حاصل کی تھی۔

اسی بارے میں