لیورپول اور مڈلزبرو کا ریکارڈ شوٹ آؤٹ

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption لیورپول نے 13-14 گول کی جیت کے ساتھ اگست سنہ 2011 میں فٹبال ليک ٹرافی میں ریڈبرج اور لیٹن اورینٹ کے درمیان کھیلے جانے والے میچ کی برابری کر لی

انگلینڈ میں کیپیٹل ون فٹبال کپ میں لیورپول نے ریکارڈ پینلٹی شوٹ آؤٹ میں مڈلزبرو کو 13 کے مقابلے 14 گول سے ہرا دیا ہے۔

واضح رہے کہ دونوں ٹیموں کے درمیان میچ دو دو گول کی برابری پر ختم ہو گیا تھا جس کے بعد 30 پنالٹی شوٹ آؤٹس لگائی گئیں۔

آخر میں مڈلزبرو کے کھلاڑی البرٹ ایڈوما گول کرنے میں ناکام رہے اور اس کے سبب لیورپول چوتھے راؤنڈ میں پہنچ گیا۔

لیورپول نے اپنا پہلا میچ کھیلنے والے جارڈن روسیٹر کے گول کی بدولت سبقت حاصل کر لی تھی لیکن بورو کے ایڈم ریچ نے ہیڈر کے ذریعےگول کر کے اسے برابر کر دیا۔

اضافی منٹ کے کھیل میں ایک بار پھر لیورپول نے برتری حاصل کر لی لیکن پیٹرک بامفورڈ کی پینلٹی نے میچ کو شوٹ آؤٹ مرحلے میں پہنچا دیا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption اس میچ میں گول کیپر سمیت دونوں ٹیم کے تمام کھلاڑیوں نے گول کیے

اس کے بعد اصل ڈراما شروع ہوا جس نے انگلش پروفیشنل فٹبال کی تاریخ میں ایک نیا ریکارڈ قائم کیا۔

سائمن مینولیٹ نے مڈلزبرو کی جانب سے پہلی پینلٹی کو روک دیا تھا لیکن رحیم سٹرلنگ نے پانچویں پینلٹی مس کر کے کھیل کو ’سڈن ڈیتھ‘ مرحلے میں پہنچا دیا۔

حیرت انگیز طور پر اس کے بعد لی جانے والی بیس پینلٹیز پرگول ہوئے اور دونوں ٹیموں کے گول کیپروں سمیت سارے کھلاڑیوں نے گول کیے۔

لیکن جب مڈلزبرو کے اڈوما کی کک گول سے باہر چلی گئی تو لیورپول نے اپنی جیت کا جشن منانا شروع کر دیا۔

اس سے پہلے آرسنل اور روہدرم کے درمیان ليگ کپ میں پینلٹی شوٹ آؤٹ کا نتیجہ 8-9 تھا اور یہ ریکارڈ سنہ 2004 میں قائم ہوا تھا، جبکہ ایف اے کپ میں میک کلیسفیلڈ نے فارسٹ گرین کو نومبر سنہ 2011 میں شوٹ آؤٹ میں 10-11 سے شکست دی تھی۔

اسی بارے میں