سعد نسیم کا پہلا بُلاوا

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption ۔۔۔سعد نسیم کے والد لاہور کی کرکٹ میں خاصے سرگرم رہے ہیں

سعد نسیم چیمپئنز لیگ ٹی ٹوئنٹی میں حصہ لینے والی لاہور لائنز کےساتھ بنگلور میں پریکٹس میں مصروف تھے کہ انھیں پاکستانی ٹی ٹوئنٹی ٹیم میں شامل ہونے کی نوید سنائی گئی۔

یہ پاکستانی ٹیم کے لیے 24 سالہ سعد نسیم کا پہلا بلاوا ہے جس پر وہ بہت خوش ہیں۔

’ہر کرکٹر کی خواہش ہوتی ہے کہ وہ اپنے ملک کی نمائندگی کرے۔ میں خوش ہوں کہ مجھے یہ موقع دیا گیا ہے۔ میری کوشش ہوگی کہ میں آسٹریلیا کے خلاف واحد ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشنل کھیلوں اور اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کروں۔‘

سعد نسیم کا کہنا ہے کہ چیمپئنز لیگ کھیلنے کا تجربہ بہت اچھا رہا ہے اور کپتان محمد حفیظ سمیت تمام ہی سینیئر کھلاڑیوں نے ان کی حوصلہ افزائی کی ہے۔

سعد نسیم باصلاحیت کرکٹر ہیں جو بیٹنگ کے ساتھ ساتھ لیگ سپن بولنگ بھی کرتے ہیں۔وہ ڈومیسٹک کرکٹ میں واپڈا اور لاہور کی ٹیموں کی نمائندگی کرتے ہیں۔

لاہور لائنز کے کپتان محمد حفیظ سعد نسیم کی صلاحیتوں کے بڑے معترف ہیں ۔ان کا کہنا ہے کہ چیمپئنز لیگ کے کوالیفائنگ راؤنڈ میں انھوں نے دو اچھی اننگز کھیلیں تاہم انگلی زخمی ہونے کے سبب وہ بولنگ نہیں کر سکے۔

محمد حفیظ کو سعد نسیم کی وہ کارکردگی بھی اچھی طرح یاد ہے جو انھوں نے اسی سال قومی ٹی ٹوئنٹی ٹورنامنٹ میں لاہور لائنز کی طرف سے دکھائی تھی جس کے نتیجے میں حفیظ کو ٹی ٹوئنی کی وننگ ٹرافی اٹھانے کا موقع ملا تھا۔

سعد نسیم نے کوارٹرفائنل میں ملتان ٹائیگرز کے خلاف تین چھکوں اور تین چوکوں کی مدد سے 61 رنز بنائے تھے اور پھر فائنل میں ان کے ناقابل شکست 43 رنز نے لاہور لائنز کو فیصل آباد کے خلاف میچ کی آخری گیند پر تین وکٹوں کی جیت سے ہمکنار کردیا تھا۔

سعد نسیم نے فرسٹ کلاس کرکٹ کا آغاز سات سال قبل 17 سالہ نوجوان کی حیثیت میں کیا تھا اور صرف پانچ رنز کی کمی سے اپنے اولین فرسٹ کلاس میچ میں سنچری کے اعزاز سےمحروم رہے تھے۔

تین سال قبل پاکستان کے دورے پر آئی ہوئی افغانستان کی ٹیم کے خلاف فیصل آباد کے ون ڈے میں انھوں نے آٹھویں نمبر پر بیٹنگ کرتے ہوئے ناقابل شکست 50 رنز بنائے تھے اور وکٹ کیپر سرفراز احمد کے ساتھ مل کر پاکستان اے ٹیم کو چار وکٹوں سے کامیابی دلائی تھی۔

سعد نسیم ڈھاکہ پریمیر لیگ میں بھی کھیل چکے ہیں ان کے والد لاہور کی کرکٹ میں خاصے سرگرم رہے ہیں اور منیجر سمیت مختلف ذمہ داریاں نبھاتے رہے ہیں۔

سعد نسیم سے جب ان کے پسندیدہ کرکٹر کے بارے میں پوچھا گیا تو ان کا جواب تھا مائیکل کلارک۔

اسی بارے میں