پاکستانی سپنرز کی عمدہ بولنگ، نیوزی لینڈ کے چھ کھلاڑی آؤٹ

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption چوتھی وکٹ 79 کے مجموعی سکور پر گری جب اینڈرسن کو یاسر شاہ نے صفر پر بولڈ کیا

دبئی میں کھیلے جانے والے دوسرے کرکٹ ٹیسٹ میچ کے چوتھے دن کے کھیل کے اختتام پر نیوزی لینڈ نے چھ وکٹوں کے نقصان پر 167 رنز سکور کیے اور اسے پاکستان پر 177 رنز کی برتری حاصل ہے۔

اس سے قبل چوتھے دن پہلی اننگز میں پاکستان پر دس رنز کی برتری کے بعد نیوزی لینڈ نے دوسری اننگز کا آغاز کیا۔

کھیل کے اختتام پر راس ٹیلر 77 پر اور کریگ صفر پر کھیل رہے ہیں۔

تفصیلی سکور کارڈ

ٹیلر نے محتاط بیٹنگ کرتے ہوئے نصف سنچری مکمل کی۔

آؤٹ ہونے والے پہلے بلے باز ٹام لیتھم تھے جنھیں یاسر شاہ کی گیند پر اسد شفیق نے لیگ سلپ میں کیچ کیا۔

نیوزی لینڈ کے دوسرے آؤٹ ہونے والے کھلاڑی ولیمسن تھے جن کو ذوالفقار بابر نے آؤٹ کیا۔

تیسرے آؤٹ ہونے والے کھلاڑی میک کلم تھے جنھوں نے 45 رنز سکور کیے اور ان کو بھی ذوالفقار بابر نے آؤٹ کیا۔

چوتھی وکٹ 79 کے مجموعی سکور پر گری جب اینڈرسن کو یاسر شاہ نے صفر پر بولڈ کیا۔

پانچویں کھلاڑی آؤٹ ہونے والے جیمز نیشم تھے جنھوں نے 11 رنز سکور کیے اور ان کو ذوالفقار بابر نے بولڈ کیا۔

سپنر یاسر شاہ نے واٹلنگ کو 11 رنز پر آؤٹ کیا۔

اس سے قبل پاکستانی ٹیم کھانے کے وقفے کے بعد اپنی پہلی اننگز میں 393 رنز بنا کر آؤٹ ہوگئی۔

چوتھے دن ابتدا میں ایسا لگ رہا تھا کہ نیوزی لینڈ کی ٹیم بڑی برتری حاصل کرنے میں کامیاب ہو جائے گی لیکن پاکستانی بلے بازوں کی آخری جوڑی سرفراز احمد اور راحت علی نے 81 رنز کی شراکت قائم کر کے ان کے ارادے ناکام بنا دیے۔

یہ نیوزی لینڈ کے خلاف دسویں وکٹ کے لیے پاکستان کی جانب سے سب سے بڑی پارٹنر شپ ہے۔

اس دوران سرفراز احمد نے ٹیسٹ کرکٹ میں اپنی تیسری سنچری بھی مکمل کی۔ وہ 112 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔ اس سنچری کی بدولت وہ ایک کیلینڈر ایئر میں تین ٹیسٹ سنچریاں بنانے والے پہلے وکٹ کیپر بن گئے ہیں۔

جمعرات کو جب کھیل شروع ہوا تو نیوزی لینڈ کے بولروں نے ابتدا میں ہی مزید تین پاکستانی وکٹیں حاصل کر لیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption سرفراز احمد ایک کیلینڈر ایئر میں تین ٹیسٹ سنچریاں بنانے والے پہلے وکٹ کیپر بن گئے ہیں

پاکستان نے چھ وکٹوں کے نقصان پر 281 رنز سے اننگز دوبارہ شروع کی تو یاسر شاہ سکور میں بغیر کوئی اضافے کیے پویلین لوٹ گئے۔

مجموعی سکور میں صرف دو رنز کے اضافے کے بعد احسان عادل کی وکٹ گری۔ ان دونوں بلے بازوں کو ٹم ساؤدی نے آؤٹ کیا۔

اس کے بعد نویں وکٹ کے لیے ذوالفقار بابر اور سرفراز احمد کے درمیان 25 رنز کی شراکت ہوئی۔ اس دوران سرفراز نے اپنی نصف سنچری بھی مکمل کی۔

اس شراکت کا خاتمہ بولٹ نے ذوالفقار بابر کو آؤٹ کر کے کیا جنھوں نے پانچ رنز بنائے۔

نیوزی لینڈ کی جانب سے ساؤدی تین وکٹوں کے ساتھ سب سے کامیاب بولر رہے جبکہ سوڈھی اور بولٹ نے دو، دو وکٹیں لیں۔

نیوزی لینڈ نے اس میچ میں ٹاس جیت کر پہلے کھیلنے کا فیصلہ کیا تھا اور اس کی پوری ٹیم میچ کے دوسرے دن 403 رنز بنا کر آؤٹ ہوگئی تھی۔

واضح رہے کہ پاکستان نے پہلا میچ جیت کر سیریز میں ایک صفر کی برتری حاصل کر رکھی ہے۔

اسی بارے میں