چیمپیئنز ٹرافی: بھارت کو شکست، پاکستان فائنل میں

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption بھارت آج تک چیمپیئنز ٹرافی مقابلوں کے ناک آؤٹ مرحلے میں پاکستان کو شکست نہیں دے سکا ہے

بھارت کے شہر بھونیشور میں کھیلے جانے والے چیمپیئنز ٹرافی ہاکی ٹورنامنٹ میں سیمی فائنل میں پاکستان روایتی حریف بھارت کو چار تین سے شکست دے کر فائنل میں پہنچ گیا ہے۔

فائنل میں پاکستان کا مقابلہ جرمنی سے ہو گا۔

بھارت اور پاکستان کا کھیل ہمیشہ کی طرح تیز اور سخت رہا۔ پاکستان کی فتح پر سٹیڈیم خاموش ہو گیا اور پاکستانی کھلاڑی سجدوں میں چلے گئے۔

پاکستان کی جانب سے ارسلان قادر نے دو گول کیے۔

بھارت آج تک چیمپیئنز ٹرافی مقابلوں کے ناک آؤٹ مرحلے میں پاکستان کو شکست نہیں دے سکا ہے۔

بھارت کو میچ کے بارہویں منٹ میں پنلٹی کارنر کے ذریعے کامیابی ملی جب گرجندر سنگھ نے گول کیا۔

میچ کے 14ویں منٹ میں گربج سنگھ کو ہیلو کارڈ دکھایا گیا اور ان کو دس منٹ کے لیے فیلڈ سے باہر بھیج دیا گیا۔

میچ کے 17ویں منٹ میں پاکستان کے ارسلان قادر نے فیلڈ گول کر کے میچ برابر کر دیا۔

میچ کے 29ویں منٹ میں بھارتی کھلاڑی کو دھکا دینے پر پاکستانی کھلاڑی محمد عرفان کو ییلو کارڈ ملا جس کے باعث ان کو دس منٹ کے لیے باہر بھیج دیا گیا۔

میچ کے 32 ویں منٹ میں وقاص نے فیلڈ گول کر کے پاکستان کو برتری دلوا دی۔

میچ کے تیسرے کوارٹر میں 43 ویں منٹ میں سردار سنگھ نےفیلڈ گول کیا۔ اس گول کے بعد کھیل میں مزید تیزی آئی۔

محمد عرفان نے پاکستان کی جانب سے پنلٹی کارنر پر گول کر کے پاکستان کو برتری دلوا دی۔ تاہم یہ برتری زیادہ دیر برقرار نہیں رہی جب بھارت نے گول کر کے میچ برابر کردیا۔

پاکستان کو میچ کے 59 ویں منٹ میں ارسلان نے پاکستان کی جانب سے چوتھا گول کر کے برتری دلوائی جو میچ کے ختم ہونے تک برقرار رہی۔

سنیچر کو کالنگا سٹیڈیم میں یہ سیمی فائنل کھیلا گیا۔

اس سے قبل پہلے سیمی فائنل میں جرمنی نے گذشتہ پانچ مقابلوں کی چیمپیئن آسٹریلوی ٹیم کو تین دو سے شکست دے دی تھی۔

پاکستان اور بھارت کی ہاکی ٹیمیں رواں برس دوسری مرتبہ کسی عالمی ٹورنامنٹ کے اہم مرحلے میں مدِمقابل تھے۔

اس سے قبل انچيون میں ایشیائی کھیلوں میں ہاکی کے مقابلوں کے فائنل میں بھی دونوں آمنے سامنے آئی تھیں اور وہاں بھارت نے پاکستان کو شکست دے کر 16 سال بعد ایشیائی کھیلوں میں ہاکی میں طلائی تمغہ جیتا تھا۔

یہ دونوں ٹیمیں 2012 کی چیمپیئنز ٹرافی میں کانسی کے تمغے کے لیے مدِمقابل آئی تھیں اور پاکستان نے بھارت کو دو کے مقابلے میں تین گول سے شکست دی تھی۔

بھارت آج تک چیمپیئنز ٹرافی ٹورنامنٹ کا فائنل نہیں کھیل سکا جبکہ پاکستانی ٹیم تین مرتبہ یہ ٹورنامنٹ جیت چکی ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption بھارت آج تک چیمپیئنز ٹرافی ٹورنامنٹ کا فائنل نہیں کھیل سکا

اس چیمپیئنز ٹرافی میں دونوں ٹیموں کی کارکردگی ابتدا میں انتہائی خراب رہی لیکن کوارٹر فائنل مرحلے میں دونوں نے اپنے سے بہتر حریف کو شکست دے کر ماہرین کو حیران کر دیا۔

پول مقابلوں میں پاکستانی ٹیم اپنے تینوں میچ ہارنے کے بعد آخری نمبر پر رہی تھی۔

ان تین میچوں میں اس کے خلاف 13 گول ہوئے جبکہ پاکستانی ٹیم صرف تین گول ہی کر سکی تھی۔

اپنے پول میں بھارت کا حال بھی پاکستان سے زیادہ مختلف نہ تھا اور اسے تین میں سے دو میچوں میں شکست ہوئی۔

جرمنی نے اسے ایک گول سے ہرایا تو ارجنٹائن کی ٹیم نے بھارت پر دو کے مقابلے میں چار گول سے فتح حاصل کی۔

تاہم لیگ مرحلے کے آخری میچ میں بھارت نے ہالینڈ کو ہرا کر ٹورنامنٹ میں اپنے پہلے پوائنٹس لیے تھے۔

کوارٹر فائنل میں بھارت کا سامنا بیلجیئم سے ہوا اور یہ میچ میزبان ٹیم نے دو کے مقابلے میں چار گول سے جیت کر سیمی فائنل میں جگہ بنا لی۔

اسی بارے میں