کرائسٹ چرچ میں میک کلم کی ریکارڈ ساز اننگز

Image caption میک کلم نے نیوزی لینڈ کی جانب سے ٹیسٹ میچ میں تیز ترین سنچری کا اپنا ہی ریکارڈ توڑ ڈالا

نیوزی لینڈ نے کپتان برینڈن میک کلم کی ریکارڈ ساز اننگز کی بدولت سری لنکا کے خلاف کھیل کے اختتام پر سات وکٹوں پر 429 رنز بنا لیے۔

کرائسٹ چرچ میں کھیلے جانے والے پہلے ٹیسٹ کے پہلے دن میک کلم پانچ رنز کی کمی سے ڈبل سنچری مکمل نہ کر سکے۔

وہ 134 گیندوں پر 195 رنز کی جارحانہ اننگز کھیل کر آؤٹ ہوئے۔ انھوں نے اس اننگز کے دوران 11 چھکے اور 18 چوکے لگائے۔

سری لنکن کپتان اینجلو میتھیوز نے ٹاس جیت کر بولروں کے موافق دکھائی دینے والی وکٹ پر میزبان ٹیم کو پہلے کھیلنے کی دعوت دی۔

ایک موقعے پر 88 کے مجموعی سکور پر تین کھلاڑی آؤٹ کر کے سری لنکن بولروں نے ان کا فیصلہ درست ثابت بھی کر دیا تھا۔

تاہم پھر میک کلم نے پہلے کین ولیمسن اور پھر جمی نیشم کے ساتھ مل کر جارحانہ انداز میں بلے بازی کی اور ٹیم کو مشکلات سے نکالا۔

اس دوران نیوزی لینڈ کے کپتان نے اپنی 11ویں سنچری 74 گیندوں پر مکمل کر کے نیوزی لینڈ کی جانب سے ٹیسٹ میچ میں تیز ترین سنچری کا اپنا ہی ریکارڈ توڑ ڈالا۔

اس سے قبل انھوں نےپاکستان کے خلاف گذشتہ ماہ شارجہ میں 78 گیندوں پر سنچری بنائی تھی۔

اپنی اس طوفانی اننگز کے دوران میک کلم ایک کیلینڈر ایئر میں ایک ہزار رنز بنانے والے نیوزی لینڈ کے پہلے بلے باز بھی بن گئے۔

انھوں نے سورنگا لکمل کے ایک اوور میں 26 رنز بنا کر سب سے زیادہ رنز کا ریکارڈ بھی برابر کیا۔ اس اوور میں میک کلم نے تین چھکے اور دو چوکے مارے۔

اپنی اننگز میں انھوں نے کل 11 چھکے لگائے اور کسی بلے باز کی جانب سے ٹیسٹ اننگز میں سب سے زیادہ چھکوں کی فہرست میں دوسرے نمبر پر رہے۔

ایک ٹیسٹ اننگز کے دوران سب سے زیادہ چھکے لگانے کا اعزاز پاکستان کے وسیم اکرم کو حاصل ہے جنھوں نے زمبابوے کے خلاف میچ میں ڈبل سنچری بناتے ہوئے 12 چھکے لگائے تھے۔

اسی بارے میں