ٹیسٹ کرکٹ کی تاریخ میں نیوزی لینڈ کا بہترین سال

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption میک کلم کو 134 گیندوں پر 195 رنز کی جارحانہ اننگز کے لیے مین آف دی میچ قرار دیا گیا

کرائسٹ چرچ میں ہونے والے پہلے میچ میں میزبان نیوزی لینڈ نے سری لنکا کی ٹیم کو بہ آسانی آٹھ وکٹوں سے شکست دے دی ہے اور اس طرح اس نے اپنے ٹیسٹ کرکٹ تاریخ کے بہترین سال کا اختتام کیا۔

نیوزی لینڈ کے کپتان برینڈن میک کلم کی جارحانہ ریکارڈ سنچری کی بدولت اس سال نیوزی لینڈ کو پانچ ٹیسٹ میچوں میں کامیابی حاصل ہوئی ہے جو کہ ایک ریکارڈ ہے۔ میک کلم کو ان کی اس کارکردگی پر مین آف دا میچ قرار دیا گیا۔

اس سے قبل کھیل کے دوسرے ہی دن سری لنکا کو فالو آن پر مجبور ہونا پڑا تھا تاہم اس نے دوسری اننگز میں بہتر کھیل کا مظاہرہ کیا اور اننگز کی شکست سے بچنے میں کامیاب رہا۔

مکمل سکور کارڈ

سری لنکا نے دوسری اننگز میں 407 رنز بنائے اور نیوزی لینڈ کو 105 رنز کا معمولی ہدف دیا جسے نیوزی لینڈ نے دو وکٹ کے نقصان پر حاصل کر لیا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption نیوزی لینڈ کی طرف سے بیٹنگ میں کپتان میک کلم نے نمایاں کردار ادا کیا تو بولنگ میں ٹم ساؤدی نے

سری لنکا کے کپتان اینجلو میتھیوز نے میچ کے بعد کہا پہلی اننگز میں ہماری بیٹنگ اچھی نہیں رہی جس کی وجہ سے ہم میچ سے باہر ہو گئے۔

اس سے قبل سری لنکا نے ٹاس جیت کر نیوزی لینڈ کو بیٹنگ کی دعوت دی۔ نیوزی لینڈ نے کپتان میک کلم کی جارحانہ بیٹنگ کے سبب 441 رنز بنائے۔ میک کلم نے 134 گیندوں پر 195 رنز بنائے جس میں 11 چھکے اور 18 چوکے تھے۔

جواب میں سری لنکا کی ٹیم پوری ٹیم 138 رنز پر ڈھیر ہو گئی۔ نیوزی لینڈ نے سری لنکا کو فالوآن دیا۔ سری لنکا نے محتاط انداز میں بیٹنگ کرتے ہوئے دوسری اننگز میں 407 رنز بنائے جس میں کرونا رتنے کی سنچری شامل تھی۔ انھوں نے انتہائی محتاط انداز میں بیٹنگ کرتے ہوئے 152 رنز بنائے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption کرونا رتنے نے پہلی اننگز میں سکورز کو زحمت نہیں دی تھی لیکن اس کا ازالہ انھوں نے دوسری اننگز میں سینچری بنا کر کیا

نیوزی لینڈ کی جانب سے ٹم ساؤدی اور ٹرینٹ بولٹ نے چار چار وکٹ لیے۔

نیوزی لینڈ نے مطلوبہ 105 رنز دو وکٹوں کے نقصان پر حاصل کر لیا۔ کین ولیمسن اور راس ٹیلر نے بالترتیب 31 اور 39 رنز بنائے اور آؤٹ نہیں ہوئ‏ے۔

اس جیت کے ساتھ نیوزی لینڈ کو دو میچوں کی اس سیریز میں ایک صفر کی سبقت حاصل ہو گئی ہے۔ اس سیریز میں نیوزی لینڈ اور سری لنکا کے درمیان سات ون ڈے میچ کھیلے جائیں گے۔

اسی بارے میں