ویلنگٹن ٹیسٹ میں سری لنکا کی پوزیشن مستحکم

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption کین ولیمسن پہلی اننگز کی طرح دوسری اننگز میں بھی نمایاں سکورر رہے

ویلنگٹن میں جاری دوسرے ٹیسٹ میچ کے تیسرے دن کھیل کے اختتام پر نیوزی لینڈ نے اپنی دوسری اننگز میں پانچ وکٹوں کے نقصان پر 253 رنز بنائے ہیں اور اس نے سری لنکا پر 118 رنز کی مجموعی سبقت حاصل کر لی ہے۔

تیسرے روز نیوزی لینڈ کی پانچ وکٹیں 159 رنز پر ہی گر گئی تھیں لیکن اس کے بعد سے کین ولیمسن اور وکٹ کیپر والٹنگ نے محتاط انداز میں کھیلتے ہوئے ٹیم کی حالت میں بہتری لانے کی کوشش جاری رکھی۔

دن کے کھیل کے اختتام پر ولیم سن 80 رنز پر جبکہ والٹنگ 48 رنز پر کریز پر موجود تھے۔ چوتھے دن سری لنکا کی ٹیم جلد از جلد پانچ وکٹیں حاصل کرنا چاہے گی جبکہ نیوزی لینڈ زیادہ سے زیادہ سبقت لینے کی کوشش میں رہے گی۔ سری لنکا کی جانب سے پردیپ نے پانچ میں سے تین وکٹیں حاصل کی ہیں۔

تازہ سکور دیکھیں

اس سے قبل کھیل کے دوسرے دن سری لنکا نے کمارا سنگاکارا کی ڈبل سنچری کی بدولت 135 رنز کی اہم سبقت حاصل کرلی تھی۔سنگاکارا نے اپنی یادگار اننگز سے سری لنکا کو ایک بےحد مشکل پوزیشن سے نکالا تھا۔

دوسرے دن کے کھیل کے اختتام پر نیوزی لینڈ نے اپنی دوسری اننگز میں محتاط طریقے سے کھیلتے ہوئے بغیر کسی نقصان کے 22 رنز بنا لیے تھے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption یہ کمارا سنگاکارا کی 11ویں ڈبل سینچری تھی۔ کرکٹ کی تاریخ میں صرف ڈان بریڈمین نے ان سے زیادہ ڈبل سینچریاں سکور کی ہیں

ایک وقت سری لنکا کی پانچ وکٹیں صرف 78 رنز پر گر گئی تھیں لیکن پھر سنگاکارا اور چندی مل کے درمیان 130 رنز کی شراکت ہوئی۔ چندی مل کے 67 رنز بنا کر آؤٹ ہونے کے بعد سنگاکارا نے دوسرے ٹیل اینڈرز کے ساتھ کھیلتے ہوئے اپنی ٹیم کو سنبھالا دینا شروع کر دیا۔

سری لنکا کے کل سکور 356 میں سنگاکارا کا حصہ 57 فیصد رہا۔ نیوزی لینڈ کی طرف سے بریس ویل اور نیشم نے تین تین کھلاڑی آؤٹ کیے۔

واضح رہے کہ اس میچ میں کمارا سنگاکارا سب سے کم اننگز میں 12 ہزار رنز مکمل کرنے والے کھلاڑی بھی بن گئے۔ انھوں نے 224 ٹیسٹ اننگز میں 12 ہزار مکمل کیے جبکہ بھارت کے معروف کرکٹر سچن تندولکر نے 247 اننگز میں 12 ہزار رنز مکمل کیے تھے۔

اس سے قبل سری لنکا نے ٹاس جیت کر نیوزی لینڈ کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی۔ پہلے ٹیسٹ کے مقابلے ان کا یہ فیصلہ قدرے اچھا ثابت ہوا جب انھوں نے نیوزی لینڈ کو 221 رنز پر آؤٹ کر دیا۔

پہلے میچ میں ریکارڈ ساز اننگز کھیلنے والے برینڈن میک کلم اس اننگز میں صفر پر آوٹ ہوئے اور نیوزی لینڈ کی جانب سے کین ولیم سن کے علاوہ کوئی بھی بیٹسمین نصف سنچری نہ بنا سکا۔

سری لنکا کی جانب سے نوان پردیپ نے چار جبکہ سورنگا لکمل نے تین وکٹ لیے۔ دو وکٹیں دھمیکا پرساد کے حصے میں آئیں جبکہ ایک وکٹ کپتان میتھیوز نے لی۔

دو میچ کی اس ٹیسٹ سیریز میں نیوزی لینڈ نے ایک صفر کی سبقت لے رکھی ہے جبکہ ابھی ون ڈے سیریز ہونا باقی ہے۔

اسی بارے میں