بریٹ لی نےکرکٹ کو خیرباد کہہ دیا

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption بریٹ لی نے آسٹریلیا کی جانب سے 76 ٹیسٹ میچوں میں 310 جبکہ ایک روزہ میچوں میں 380 وکٹیں حاصل کیں

آسٹریلیا کے معروف فاسٹ بولر بریٹ لی نے ہر قسم کی کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کا اعلان کر دیا ہے۔

اس بات کا اعلان انھوں نے جمعرات کو سڈنی کرکٹ گراؤنڈ میں کیا۔

خیال رہے کہ بریٹ لی نے جولائی سنہ 2012 میں ٹیسٹ کرکٹ کو خیر آباد کہہ دیا تھا اور اس کے بعد انھوں نے ایک روزہ میچوں سے بھی ریٹائرمنٹ لے لی تھی۔

بریٹ لی نے آسٹریلیا کی جانب سے 76 ٹیسٹ میچوں میں 310 جبکہ ایک روزہ میچوں میں 380 وکٹیں حاصل کیں۔

38 سالہ کرکٹر کا کہنا تھا ’ کرکٹ میں میرے 20 سال بہت زیادہ حیران کن اور جذباتی رہے اور میں نے ایک ایک لمحے کا لطف اٹھایا۔‘

انھوں نے مزید کہا کہ وہ اپنے فیصلے پر خوش ہیں اور سمجھتے ہیں کہ انھوں نے صحیح وقت پر صحیح فیصلہ کیا ہے۔

انھوں نے کہا کہ وہ بگ بیش لیگ کرکٹ لیگ کے باقی میچوں میں سڈنی سکسرز کی جانب سے حصہ لیں گے اور آنے والی جمعرات کو سڈنی تھنڈر کے خلاف ان کا آخری میچ ہو گا۔

آسٹریلیا کی جانب سے ٹیسٹ کرکٹ میں شین وارن، گلین میک گرا اور ڈینس للی بریٹ لی سے زیادہ وکٹیں حاصل کر چکے ہیں۔

وہ میگ گرا کے ساتھ ایک روزہ میچوں 380 وکٹیں حاصل کرنے والے دوسرے بولر ہیں۔

سنہ 1990 سے سنہ 2000 کی دہائی کے دوران بریٹ لی نے آسٹریلیا کی فتوحات میں نمایاں کردار ادا کیا۔

وہ سنہ 2003 میں کرکٹ کا عالمی کپ جیتنے والی آسٹریلوی ٹیم کا بھی حصہ رہے۔

کرکٹ آسٹریلیا کے چیف ایگزیکٹو جیمز سدر لینڈ نے بریٹ لی کو خراجِ تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ وہ ایک غیر معمولی کرکٹر تھے جنھوں نے اپنی تیز رفتار بولنگ سے کرکٹ کی دنیا میں اپنا نام بنایا۔

اسی بارے میں