برزبین: بھارت کی ٹورنامنٹ میں لگاتار دوسری شکست

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption ایئن بیل نے ٹیلر کے ساتھ مل کر باآسانی اپنی ٹیم کو فتح دلوا دی

آسٹریلیا میں جاری سہ فریقی کرکٹ سیریز کے ایک میچ میں انگلینڈ نے بھارت کو نو وکٹوں سے شکست دے دی ہے۔

بزربین میں منگل کو کھیلے جانے والے میچ میں بھارت نے انگلینڈ کو فتح کے لیے 154 رنز کا ہدف دیا تھا جو اس نے ایک وکٹ کے نقصان پر باآسانی 28ویں اوور میں حاصل کر لیا۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

انگلش اننگز کی خاص بات ایئن بیل اور ٹیلر کی عمدہ بلے بازی تھی جنھوں نے نصف سنچریاں بنائیں اور آؤٹ نہیں ہوئے۔

بیل نے 88 رنز کی ناقابلِ شکست اننگز کھیلی جبکہ ٹیلر 54 رنز پر ناٹ آؤٹ رہے۔

اس فتح کے نتیجے میں انگلش ٹیم بونس پوائنٹ حاصل کرنے میں بھی کامیاب رہی۔

ان دونوں بلے بازوں نے دوسری وکٹ کے لیے 129 رنز کی ناقابلِ شکست شراکت قائم کی۔

اس سے قبل سٹیون فن اور جیمز اینڈرسن کی عمدہ فاسٹ بولنگ کی بدولت بھارتی ٹیم بڑا سکور کرنے میں ناکام رہی۔

بھارتی بلے باز شاٹ پچ گیندوں کے سامنے بے بس نظر آئے اور سٹوئرٹ بنی اور کپتان دھونی کے علاوہ کوئی بھی بلے باز زیادہ دیر وکٹ پر نہ رک سکا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption سٹیون فن نے 33 رنز دے کر پانچ وکٹیں حاصل کیں

چھ بھارتی کھلاڑی اپنا انفرادی سکور دوہرے ہندسوں تک بھی نہ پہنچا سکے۔

بھارت کی اننگز آغاز سے ہی مشکلات کا شکار ہوئی جب شیکھر دھون ایک مرتبہ پھر ناکام ہوئے اور تیسرے اوور میں ایک رن بنا کر کیچ دے بیٹھے۔

اس کے بعد امت رائیڈو اور اجنکیا ریہانے نے 56 رنز کی شراکت قائم کی جس کا خاتمہ فن نے ریہانے کو آؤٹ کر کے کیا۔

ان کی جگہ آنے والے ویراٹ کوہلی چار رنز ہی بنا سکے جبکہ سریش رائنا مجموعی سکور میں مزید ایک رن کے اضافے کے بعد پویلین لوٹ گئے۔

جب 19ویں اوور میں فن نے رائیڈو کو آؤٹ کیا تو 67 رنز کے مجموعی سکور پر بھارت کی آدھی ٹیم پویلین واپس جا چکی تھی۔

اس موقع پر بنی اور دھونی نے ٹیم کو سنبھالا اور چھٹی وکٹ کے لیے 70 رنز کی اہم شراکت قائم کی۔

تاہم 137 کے سکور پر دھونی کے آؤٹ ہونے کے بعد بقیہ بلے باز سکور میں 17 رنز کا اضافہ ہی کر سکے۔

انگلینڈ کی جانب سے سٹیون فن نے پانچ جبکہ جیمز اینڈرسن نے چار وکٹیں حاصل کیں اور معین علی کے حصے میں ایک وکٹ آئی۔

یہ بھارت کی ٹورنامنٹ میں مسلسل دوسری شکست ارو انگلینڈ کی پہلی فتح ہے۔ ٹورنامنٹ میں اپنے ابتدائی میچوں میں دونوں ٹیموں کو آسٹریلیا نے باآسانی شکست دی تھی۔

اسی بارے میں