دھونی کو ورلڈ کپ جیتنا آتا ہے: مائیکل وان

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption بھارت اور آسٹریلیا کے درمیان ہونے والے میچ میں بھارتی ٹیم کے مداحوں نے بڑی تعداد میں ٹکٹ خریدے ہیں

نیوزی لینڈ اور جنوبی افریقہ کے درمیان منگل کو ہونے والے شاندار سیمی فائنل کے بعد کرکٹ کے شائقین کی نگاہیں اب سڈنی کی جانب مرکوز ہیں جہاں جمعرات کو دوسرے سیمی فائنل میں دفاعی چیمپیئن بھارت اور میزبان آسٹریلیا کے درمیان مقابلہ ہے۔

کرکٹ کے ماہرین نے بھی اپنی اپنی پسند کی ٹیمیں منتخب کر لی ہیں۔

جہاں انگلینڈ کے سابق کپتان مائیکل وان نے ہندوستان کو فیورٹ قرار دیا ہے، وہیں سابق آسٹریلوی فاسٹ بولر بریٹ لی کا خیال ہے کہ میزبان آسٹریلیا بھارت کو چت کر دے گا۔

’سہرا دھونی کے سر‘

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption بھارت نے پچھلے ورلڈ کپ میں مہندر سنگھ دھونی کی کپتانی میں فتح حاصل کی تھی

مائیکل وان کا خیال ہے کہ مہندر سنگھ دھونی کی منظم کپتانی ہندوستان کو اس اہم میچ میں فتح سے ہمکنار کر سکتی ہے۔

وان کے مطابق آسٹریلیا میں ٹیسٹ اور سہ رخی ون ڈے سیریز میں شکست کے بعد بھی بھارتی ٹیم نے زبردست کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے اور اس کا سہرا کپتان دھونی کو جاتا ہے۔

وان نے کہا: ’دھونی کو ورلڈ کپ جیتنا آتا ہے اور وہ پہلے بھی یہ کام کر چکے ہیں۔ سہ رخی سیریز کے ختم ہوتے ہی انھوں نے ٹیم کی فکر اور کھلاڑیوں میں تبدیلی رونما کی۔‘

اس میچ کے سڈنی میں ہونے کو مائیکل وان بھارت کے لیے مفید تسلیم کرتے ہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption آسٹریلیا کے مداح اپنی ٹیم کی حوصلہ افزائی میں کوئی کسر نہیں چھوڑیں گے

وہ کہتے ہیں: ’بھارت کو آسٹریلیا میں کسی بھی جگہ کھیلنے کا اختیار ملتا تو وہ سڈنی کی پچ کو ہی منتخب کرتے کیونکہ یہاں گیند سپن بھی ہوتی ہے۔‘

لیکن بریٹ لی آسٹریلیا کو ہی جیت کا دعویدار تسلیم کرتے ہیں۔

ان کے مطابق آسٹریلوي ٹیم کے پاس ہر وہ ہتھیار ہے جس کے استعمال سے وہ اس میچ کو جیت سکتی ہے۔

لی نے کہا: ’وارنر اور فنچ کے بعد سٹیون سمتھ، مائیکل کلارک اور شین واٹسن۔ میرے خیال میں یہ بہت متوازن بیٹنگ ہے جس کی وجہ سے فاسٹ بالروں کو کھل کر گیند پھینکنے کی آزادی ملتی ہے۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption بریٹ لی کے مطابق آسٹریلوی ٹیم کی بیٹنگ بہت متوازن ہے

اگرچہ بریٹ لی نے اس بات کو تسلیم کیا کہ ورلڈ کپ میں بھارت کے فاسٹ بولروں نے اپنی کارکردگی سے سب کو حیران کر دیا ہے۔

انھوں نے کہا: ’شامي، امیش یادو اور موہت نے زبردست بالنگ کی ہے، بطور خاص محمد شامي نے۔ میں نے خود شامي کے ساتھ کچھ سال کرکٹ کھیلی ہے۔ وہ بہت محنتی ہیں۔‘

سڈنی میں ہونے والا یہ ڈے اینڈ نائٹ میچ جمعرات کو بھارتی وقت کے مطابق صبح نو بجے شروع ہو گا۔

اسی بارے میں