برطانیہ میں سینے پر گیند لگنے سے بیٹسمین ہلاک

تصویر کے کاپی رائٹ BTL FACEBOOK
Image caption ’وہ اپنا سینہ پکڑے وکٹ کے پیچھے دو قدم چلا اور اچانک گر پڑا‘

برطانیہ کے شمال مشرقی علاقے سرے میں 24 سالہ بیٹسمین بولن پتھ مناتھن سینے پر گیند لگنے سے ہلاک ہو گئے ہیں۔

بولن پتھ مناتھن سرے کے علاقے لانگ ڈٹن میں ایک مقامی لیگ میچ میں اپنے کلب مانی پے پیرش سپورٹس کلب کی طرف سے برطانوی تامل لیگ میں بیٹنگ کر رہا تھے۔

حادثے کے فوراً بعد ہیلی کاپٹر ایمبیولنس بلوائی گئی تاہم بولن زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گئے۔

یاد رہے کہ نومبر میں آسٹریلوی بیٹسمین فلپ ہیوز فرسٹ کلاس کرکٹ کے ایک میچ کے دوران سر پر گیند لگنے سے وفات پا گئے تھے۔

بولن کے ساتھ بیٹنگ کرنے والے ساتھی نے کولومبو مرر نامی اخبار کو بتایا: ’جب اسے گیند لگی تو میں نے اسے پوچھا کہ کیا تم ٹھیک ہو؟ اس نے مجھے انگوٹھے سے اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ پریشانی کی بات نہیں۔ پھر وہ اپنا سینہ پکڑے وکٹ کے پیچھے دو قدم چلا اور اچانک گر پڑا۔ وہ ایک بہت باصلاحیت کھلاڑی اور ہم سب کا عزیز دوست تھا۔ ہم سب اس کی موت سے بہت پریشان ہیں۔‘

مانی پے پیرش سپورٹس کلب کے فیس بک پیچ پر شائع ہونے والے بیان میں کلب کی طرف سے گہرے صدمے کا اظہار کیا گیا ہے۔

سرے کلب کے سربراہ رچرڈگولڈ نے کہا کہ کلب میں سب ہی اس حادثے سے بہت غمگین ہیں اور انھیں بولن کے دوستوں اور رشتہ داروں سے ہمدردی ہے۔‘

اس سال جون میں فیڈریشن آگ انٹرنیشنل کرکٹرز ایسوسی ایشن کی طرف سے شائع ہونے والی ایک رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ کرکٹروں کو گیند لگ کر زخمی ہونے کے اتنے ہی امکان ہیں جتنا کہ انھیں آسمانی بجلی، دماغی بیماری اور شدت پسندوں کے حملے سے ہیں۔

اسی بارے میں