تیسرا ون ڈے: پاکستان نے سری لنکا کو135 رنز سے شکست دے دی

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption یاسر شاہ نے چار کھلاڑیوں کو آؤٹ کر کے پاکستان کی جیت میں اہم کردار ادا کیا

پریماداسا کرکٹ سٹیڈیم میں کھیلے جانے والے پانچ ایک روز میچوں کی سیریز کے تیسرے میچ میں پاکستان نے سری لنکا کو 135 رنز سے شکست دے کر سیریز میں دو، ایک سے برتری حاصل کر لی ہے۔

پاکستان کے 316 رنز کے جواب میں سری لنکا کی پوری ٹیم 181 رنز بنا کر آوٹ ہو گئی۔ آخری آؤٹ ہونے والے کھلاڑی ملنگا تھے، انھیں عماد وسیم نے آؤٹ کیا۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

سری لنکا کی جانب سے لہیرو تھرمانے کے علاوہ کو ئی بھی بلے باز کریز پر جم کر نہ کھیل سکا۔ انھوں نے 67 گیندوں پر 56 رنز بنائے۔

سٹیڈیم میں بعض تماشائیوں کے پتھر پھینکنے کے بعد میچ روک دیا گیا تھا۔اس وقت سری لنکا کی سات وکٹیں گر چکی تھیں۔

اس سے قبل سری لنکا نے جب اپنی اننگز کا آغاز کیا تو اوپنر دلشان اور کوشل پریرا اپنی ٹیم کو بہتر آغاز فراہم کرنے میں ناکام رہے اور 42 رنز پر سری لنکا کی دو وکٹیں گر چکی تھیں۔

دلشان 14 اور کوشل پریرا 20 رنز بنا کر انور علی کا شکار بنے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption سری لنکا کے دونوں اوپنرز پاکستانی بولر انور علی کا شکار بنے

سری لنکا کے آوٹ ہونے والے تیسرے کھلاڑی اوپل تھرنگا تھے جنھیں یاسر شاہ نے اپنے پہلے ہی اوور میں آوٹ کیا۔

چوتھے آؤٹ ہونے والے کھلاڑی کپتان اینجلو میتھیوز تھے جس کے بعد سری لنکن ٹیم میچ میں واپس نہ آسکی اور وقفے وقفے سے اس کی وکٹیں گرتی رہیں۔

پاکستان کی جانب سے یاسر شاہ نے چار کھلاڑیوں کو آوٹ کیا۔ جبکہ اپنا پہلا میچ کھیلنے والے عماد وسیم اور انور علی نے دو، دو وکٹیں حاصل کیں۔

سرفراز احمد کو 77 رنز کی اننگز کھیلنے اور بعد میں دو کیچ اور ایک سٹمنگ کرنے پر مین آف دی میچ قرار دیا گیا۔

اس سے قبل ایک بہتر اوپننگ پارٹنر شپ کے بعد سرفراز احمد اور محمد حفیظ کی نصف سنچریوں کی بدولت پاکستان نے مقررہ 50 اوورز میں چار وکٹوں کے نقصان پر 316 رنز بنائے تھے۔

محمد حفیظ 54 اور سرفراز احمد 77 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔ دونوں بلے بازوں نے تیسری وکٹ کی شراکت میں 72 رنز بنائے۔

اوپنر احمد شہزاد اور اظہر علی نے پہلی وکٹ کی شراکت میں 93 رنز سکور کئے تھے۔ احمد شہزاد 44 اور اظہر علی 49 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption سرفراز احمد کو عمدہ اننگز کھیلنے پر میچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا

پاکستانی اننگز کے آخری اوورز میں شعیب ملک اور نوجوان کھلاڑی محمد رضوان نے اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے پانچویں وکٹ کی شراکت میں 59 رنز سکور کئے اور پاکستان کو ایک بڑے سکور تک پہنچنے میں مدد دی۔

شعیب ملک 42 اور محمد رضوان 35 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے۔

اس سے قبل پریما داسا کرکٹ سٹیڈیم میں کھیلے جانے والے تیسرے ایک روز میچ میں پاکستان نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کرنے کا فیصلہ کیا تھا۔

پاکستان نے اس میچ کے لیے ٹیم میں ایک تبدیلی کی ہے اور بابر اعظم کی جگہ نوجوان کھلاڑی عماد وسیم کو ٹیم میں شامل کیا گیا ہے۔

سری لنکا کی جانب سے لستھ ملینگا اور سچت پتھیرانا نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔

خیال رہے کہ پاکستان اور سری لنکا کے مابین پانچ ون ڈے میچوں کی سیریز 1-1 سے برابر ہے۔

اس سے قبل بدھ کو پالیکیلے میں پاکستان اور سری لنکا کے درمیان کھیلے گئے دوسرے ایک روزہ میچ میں سری لنکا نے پاکستان کو تین وکٹوں سے شکست دی تھی۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption محمد حفیظ 54 رنز بنانے کے بعد پتھیرانا کی گیند پر کیچ آؤٹ ہوئے

جبکہ دمبولا میں کھیلا گیا پہلا ون ڈے انٹرنیشنل پاکستان نے چھ وکٹوں سے جیتا تھا جس میں محمد حفیظ کی سنچری اور چار وکٹوں کی شاندار آل راؤنڈ کارکردگی نے اہم کردار ادا کیا تھا۔

’چیمپیئنز ٹرافی تک رسائی کی شرط جیت‘

پاکستانی ٹیم کے لیے چیمپیئنز ٹرافی تک رسائی کے لیے یہ سیریز جیتنا لازمی ہے۔

اگر پاکستانی ٹیم یہ سیریز تین دو کے فرق سے جیتنے میں کامیاب ہوتی ہے تو آئی سی سی کی عالمی رینکنگ میں اس کے پوائنٹس 90 اور چار ایک سے جیتنے کی صورت میں 92 ہو جائیں گے۔

واضح رہے کہ بنگلہ دیش نے جنوبی افریقہ کے خلاف ایک ون ڈے جیت کر چیمپیئنز ٹرافی میں جگہ بنا لی ہے اور اب ویسٹ انڈیز اور پاکستان میں سے کوئی ایک ٹیم آٹھ ٹیموں کے آئی سی سی ایونٹ میں حصہ لے سکے گی جو 2017 میں انگلینڈ میں کھیلا جائے گا۔

اسی بارے میں