بائرن میونخ پناہ گزینوں کے لیے تربیتی کیمپ لگائےگا

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption یورپین چیمپیئن بائرن میونیخ نے آگز برگ کے خلاف اپنے اگلے ہوم میچ میں پناہ گزینوں کے مسئلہ کو اٹھانے کا بھی کہا ہے

مشہور جرمن فٹبال کلب بائرن میونخ نے جرمنی آنے والے پناہ گزینوں کے لیے ’تربیتی کیمپ‘ لگانے اور سات لاکھ 30 ہزار پاؤنڈز امداد دینے کا اعلان کیا ہے۔

یورپ میں بہت سے تارکین وطن کے آنے کا سلسلہ جاری ہے جن میں سے کئی تارکین وطن اس وقت ہنگری میں ہیں اور وہ جرمنی جانے کی خواہش رکھتے ہیں۔

بائرن میونخ جو فٹبال لیگ بنڈس لیگا کے چیمپیئن نے بچوں کو خوراک، جرمن زبان سکھانے اور فٹبال کھیلنے کا سامان فراہم کرنے کا منصوبہ تیار کیا ہے۔

فٹبال کلب کے سی ای او کارل ہینز رومینیگی کا کہنا ہے کہ ’بائرن پناہ گزینوں کی مدد کرنے کو اپنی سماجی ذمہ داری سمجھتا ہے۔‘

یورپ میں داخل ہونے والے تارکین وطن کی تعداد رواں سال ریکارڈ حد تک پہنچ گئی ہے جن میں سے زیادہ تر شام میں جاری تنازعے کی وجہ سے بےگھر ہوئے ہیں۔

Image caption بنڈس لیگا فٹبال لیگ کے گذشتہ ہفتے کے میچوں میں پناہ گزینوں کی حمایت میں بینرز واضح طور پر دیکھے گئے

جرمنی میں پناہ کے لیے داخل ہونے والے افراد کی تعداد رواں سال آٹھ لاکھ تک پہنچ جائے گی جو گذشتہ سال کے مقابلہ میں چار گنا زیادہ ہے۔

25 مرتبہ جرمن لیگ کا اعزاز اپنے نام کرنے والے اور پانچ بار کے یورپین چیمپیئن بائرن میونخ نے آگز برگ کے خلاف اپنے اگلے ہوم میچ میں پناہ گزینوں کے مسئلے کو اجاگر کرنے کا اعلان کیا ہے۔

12 ستمبر کو ہونے والے اس میچ میں کھلاڑی میدان میں ’ایک جرمن بچے اور ایک پناہ گزین بچے کا ہاتھ تھامے اتریں گے۔‘

دوسری جانب بائرن میونخ کے حریف کلب بورشیا ڈارٹمنڈ نےگذشتہ جمعرات کو ناروے کے فٹبال کلب آڈ کے خلاف کھیلے گئے میچ میں 220 پناہ گزینوں کو میچ دیکھنے کی دعوت دی تھی۔

بنڈس لیگا فٹبال لیگ کے گذشتہ ہفتے کے میچوں میں پناہ گزینوں کی حمایت میں بینر واضح طور پر دیکھے گئے۔

اسی بارے میں