زمبابوے آسان حریف نہیں ہے: شاہد آفریدی

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption ’ورلڈ ٹی20 کو ذہن میں رکھ کر نئے کھلاڑیوں کو موقع دیا جانا اچھی بات ہے‘

اکستان کی ٹی 20 کرکٹ ٹیم کےکپتان شاہد آفریدی کا کہنا ہے کہ وہ زمبابوے کو آسان حریف نہیں سمجھتے کیونکہ اس نے حالیہ میچوں میں عمدہ کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے۔

شاہد آفریدی کی قیادت میں پاکستانی ٹیم بدھ کی رات زمبابوے روانہ ہو رہی ہے جہاں وہ 27 اور 29 ستمبر کو دو ٹی 20 میچ کھیلے گی جس کے بعد اظہر علی کی قیادت میں زمبابوے کے خلاف تین ون ڈے میچ کھیلے جائیں گے۔

زمبابوے، انگلینڈ کے خلاف سیریز کے لیے پاکستانی ٹیم کا اعلان

شاہد آفریدی کا کہنا ہے کہ ٹی20 ایک ایسا فارمیٹ ہے جس میں کسی بھی ٹیم کو آسان نہیں سمجھا جا سکتا کیونکہ اس فارمیٹ میں ایک مرتبہ کھیل آپ کے ہاتھ سے نکل جائے تو پھر واپس آنا مشکل ہو جاتا ہے۔

زمبابوے کی ٹیم نے حالیہ میچوں میں عمدہ کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے اور جب زمبابوے کی ٹیم پاکستان آئی تھی تو اس دورے میں بھی پاکستانی ٹیم اس سے آسانی سے نہیں جیت پائی تھی۔

شاہد آفریدی نے کہا کہ ورلڈ ٹی 20 کو ذہن میں رکھ کر نئے کھلاڑیوں کو موقع دیا جانا اچھی بات ہے۔

زمبابوے کے دورے میں دو نئے کھلاڑی شامل کیے گئے ہیں اس سے زیادہ نئے کھلاڑیوں کو موقع نہیں دیا جا سکتا تھا لیکن توقع ہے کہ آنے والے میچوں میں مزید باصلاحیت کرکٹروں کو آزمایا جائے گا۔

شاہد آفریدی نے نئے تیز بولر عمران خان جونیئر کے بارے میں کہا کہ وہ اچھے بولر ہیں اور ان کی سلو ڈلیوری بہت موثر ہے۔

شاہد آفریدی نے کہا کہ ورلڈ ٹی20 کی تیاری کے طور پر انھوں نے سلیکٹروں سے بات کی ہے کہ وہ انگلینڈ لائنز کے خلاف ہونے والے میچوں میں بھی کھیلنا چاہتے ہیں۔

انگلینڈ لائنز کی ٹیم اس سال دسمبر میں متحدہ عرب امارات میں پاکستان اے کے خلاف میچ کھیلے گی۔

پاکستان کرکٹ بورڈ کہہ چکا ہے کہ اگر وکٹ کیپر بیٹسمین سرفراز احمد پاکستانی ٹیم کے ساتھ مصروف نہ ہوئے تو وہ اے ٹیم کی قیادت کریں گے۔

اسی بارے میں