انضمام الحق افغان کرکٹ ٹیم کی کوچنگ کرینگے

تصویر کے کاپی رائٹ
Image caption انضمام الحق نے دو ہزار سات میں بین الاقوامی کرکٹ سے ریٹائرمنٹ لے لی تھی

پاکستانی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان انضمام الحق افغانستان کی کرکٹ ٹیم کی کوچنگ کرینگے جو اس ماہ زمبابوے کا دورہ کرنے والی ہے۔

افغانستان نے پاکستان کے سابق کرکٹ کپتان انضمام الحق کو زمبابوے کے دورے کے لیے عارضی طور پر کوچ مقرر کیا ہے۔

اس دورے میں افغانستان کی ٹیم پانچ ون ڈے انٹرنیشنل اور دو ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشنل کھیلے گی۔یہ تمام میچز بولاوایو میں کھیلے جائیں گے۔

انضمام الحق نے بی بی سی کو دیےگئے انٹرویو میں کہا کہ افغان کرکٹ حکام نے کچھ عرصہ قبل ان سے اپنی ٹیم کی کوچنگ کرنے کی درخواست کی تھی جس کی انھوں نے حامی بھرلی تھی لیکن انھوں نے کہہ دیا تھا کہ وہ مستقل بنیادوں پر یہ نہیں کرسکتے۔

انضمام کا کہنا تھا ’مجھے کسی بین الاقوامی ٹیم کی کوچنگ کا تجربہ نہیں۔ لہذا یہی وجہ ہے کہ میں پہلے دیکھنا چاہتا تھا کہ معاملات کیسے چلتے ہیں۔‘

افغان کرکٹ حکام نے ان سے کہا ہے کہ چونکہ ان کی ٹیم زمبابوے کا دورہ کرنے والی ہے لہذا وہ ٹیم کے ساتھ زمبابوے جائیں اور ٹیم کی کوچنگ کریں جس کے لیے وہ تیار ہیں۔

انضمام الحق نے کہا کہ وہ پانچ اکتوبر کو زمبابوے روانہ ہونگے اور تقریباً ایک ماہ ٹیم کے ساتھ رہیں گے۔

انضمام الحق نے کہا کہ اگر پاکستان سپر لیگ اور یا کسی بھی ٹیم نے انھیں کوچنگ کی پیشکش کی تو وہ اس پر ضرور غور کرینگے۔

پینتالیس سالہ انضمام الحق نے ایک سو بیس ٹیسٹ میچ کھیل کر آٹھ ہزار آٹھ سو تیس رنز بنائے۔ انھوں نے تین سو اٹھہتر ایک روزہ میچوں میں گیارہ ہزار سات سو انتالیس رنز سکور کیے اور دو ہزار سات میں بین الاقوامی کرکٹ سے ریٹائرمنٹ لے لی۔

انضمام الحق سے قبل پاکستان کے دو ٹیسٹ کرکٹرز کبیر خان اور راشد لطیف افغانستان کی کرکٹ ٹیم کی کوچنگ کرچکے ہیں۔

افغانستان نے کبیر خان کے بعد انگلینڈ سے تعلق رکھنے والے اینڈی مولز کو کوچ مقرر کیا تھا لیکن ورلڈ کپ کے بعد ان کے معاہدے کی تجدید نہیں کی گئی۔