پریرا کے خلاف ڈوپ ٹیسٹ ’سازش کا حصہ‘

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

سری لنکا کے کھیلوں کے وزیر کا کہنا ہے کہ وکٹ کیپر بیٹسمین کوشل پریرا کے خلاف حال ہی میں مثبت ڈوپ ٹیسٹ ’کسی سازش‘ کا حصہ ہو سکتا ہے۔

واضح رہے کہ گذشتہ ہفتے نیوزی لینڈ میں 25 سالہ کھلاڑی کوشل پریرا کا ڈوپ ٹیسٹ مثبت آیا تھا جس کے بعد انھیں واپس سری لنکا بھیج دیا گیا تھا۔

نیوزی لینڈ نے سری لنکا کو 122 رنز سے شکست دے دی

ڈونیڈن ٹیسٹ: سری لنکا کو جیت کے لیے 405 رنز کا ہدف

پالی کیلے: سری لنکا کا ویسٹ انڈیز کے خلاف کلین سوئپ

سری لنکا کے کھیلوں کے وزیر دیاسری جیاسیکرا نے پارلیمان کو بتایا کہ حکام کوشل پریرا کے ٹیسٹ کے لیے انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کو ایک اور نمونہ بھیجیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ حکومت کوشل پریرا کے دفاع کے لیے ہر ممکن کوشش کر رہی ہے۔

دیاسری جیاسیکرا نے کہا: ’ہمیں محسوس ہوتا ہے کہ یہ پریرا کو آئندہ سال ہونے والے ورلڈ ٹی20 سے باہر رکھنے کی سازش ہے۔‘

ان کا مزید کہنا تھا کہ سری لنکا کے صدر میتھری پالا سری سینا نے پریرا سے بات کی جن کا مثبت ڈوپ ٹیسٹ آنے کے بعد انھیں نیوزی لینڈ کے خلاف دو ٹیسٹ، پانچ ایک روزہ اور دو ٹی 20 میچوں پر مشتمل سیریز سے الگ کر لیا گیا۔

خیال رہے کہ آئندہ سال بھارت میں ہونے والے ورلڈ ٹی 20 میں دفاعی چیمپیئن سری لنکا فیورٹ ٹیموں میں شامل ہے اور پریرا کی معطلی ان کے لیے ایک بڑا دھچکہ ہے۔

کوشل پریرا کا بین الاقوامی ریکارڈ

میچ رنز اوسط
ٹیسٹ 3 169 33.80
ایک روزہ 51 1259 27.36
ٹی 20 22 596 27.09

اسی بارے میں