آملہ کی ڈبل سنچری، جنوبی افریقہ کی پوزیشن مستحکم

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption ہاشم آملہ نے ٹیسٹ کرکٹ میں سات ہزار رنز مکمل کر لیے

کیپ ٹاؤن میں انگلینڈ کے خلاف کرکٹ سیریز کے دوسرے ٹیسٹ میچ کے چوتھے دن کھیل کے اختتام تک انگلینڈ نے اپنی دوسری اننگز میں بغیر کسی نقصان کے 16 رنز بنائے تھے۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

ڈربن ٹیسٹ میں جنوبی افریقہ کو شکست

جب کھیل ختم ہوا تو کک آٹھ اور ہیلز پانچ رنز کے ساتھ کریز پر موجود تھے۔

اس سے قبل جنوبی افریقہ نے اپنی پہلی اننگز 627 رنز سات کھلاڑی آؤٹ پر ڈکلیئر کر دی تھی۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption بین سٹوکس اور جونی بیرسٹو کے درمیان پانچویں وکٹ کے لیے 399 رنز کی شراکت ہوئی

ہاشم آملہ کی ڈبل سنچری اور بووما کی شاندار سنچری کی بدولت جنوبی افریقہ کی پوزیشن مستحکم ہو گئی۔

انگلینڈ نے اپنی پہلی اننگز میں 629 رنز بنائے تھے۔

منگل کو جنوبی افریقہ نے تین وکٹوں کے نقصان پر 353 رنز سے اپنی پہلی اننگز دوبارہ شروع کی تو ہاشم آملہ نے محتاط انداز میں کھیلتے ہوئے 200 رنز مکمل کیے۔

ان کی ڈبل سنچری میں 27 چوکے شامل تھے لیکن وہ ڈبل سنچری بنانے کے فوراً بعد ہی سٹورٹ براڈ کی گیند پر بولڈ ہوگئے۔

اس اننگز کے دوران ہاشم آملہ نے ٹیسٹ کرکٹ میں اپنے سات ہزار رنز بھی مکمل کیے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption ہاشم آملہ نصف سنچری بنانے کے بعد جنوبی افریقی اننگز کو سنبھالنے کی کوشش میں مصروف رہے

چوتھے دن ان کا ساتھ دینے والے فاف ڈوپلیسی نے 86 رنز کی اننگز کھیلی جو 11 چوکوں سے مزین تھی۔

ڈوپلیسی کے علاوہ اس اننگز میں ابراہم ڈی ویلیئرز نے بھی نصف سنچری بنائی۔ وہ 88 رنز بنانے کے بعد کھیل کے تیسرے دن آؤٹ ہوئے تھے۔

انگلینڈ کی جانب سٹورٹ براڈ نے دو جبکہ جیمز اینڈرسن، سٹیون فن اور بین سٹوکس نے ایک ایک وکٹ لی ہے۔

اس میچ میں انگلینڈ کی ٹیم بین سٹوکس کی ڈبل سنچری اور جونی بیرسٹو کی سنچری کی بدولت پہلی اننگز میں بڑا سکور کرنے میں کامیاب رہی تھی۔

سٹوکس کی ڈبل سنچری انگلینڈ کی جانب سے تیز ترین اور ٹیسٹ کرکٹ کی تاریخ کی دوسری تیز ترین ڈبل سنچری تھی۔

اسی بارے میں