وقار یونس دورۂ انگلینڈ میں کوچ ہوں گے

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption وقار یونس کی کوچنگ میں پاکستانی ٹیم کی ون ڈے میں کارکردگی اچھی نہیں رہی ہے اور وہ نو میں سے چھ ون ڈے سیریز ہار چکی ہے

پاکستان کرکٹ بورڈ نے قومی کرکٹ ٹیم کے ہیڈ کوچ وقار یونس پر اعتماد برقرار رکھتے ہوئے انھیں اس سال انگلینڈ کے دورے میں بھی کوچ برقرار رکھنےکا فیصلہ کیا ہے۔

واضح رہے کہ وقار یونس کا کوچ کی حیثیت سے دو سالہ معاہدہ انگلینڈ کے دورے سے پہلے رواں برس مئی میں ختم ہو رہا ہے۔

’محمد عامر دوسرے چانس کے مستحق ہیں‘

’نوجوان کرکٹرز ہمارا مستقبل ہیں، اب انھی پر انحصار کرنا ہوگا‘

پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین شہر یارخان نے بی بی سی سے بات کرتے ہوئے کہا کہ وقار یونس اور دیگر کوچنگ سٹاف کے معاہدوں کی تجدید کے بارے میں ابھی حتمی فیصلہ نہیں کیاگیا ہے لیکن یہ طے ہے کہ وقار یونس سمیت پورا کوچنگ سٹاف انگلینڈ کے دورے میں اپنی ذمہ داریاں جاری رکھے گا۔

شہر یار خان نے کہا کہ ٹیم کے فزیو بریڈ رابنسن اس ماہ نیوزی لینڈ کے دورے کے بعد پاکستانی ٹیم سے وابستہ نہیں رہیں گے۔ ان کی جگہ دیکھا جائے گا کہ کس غیر ملکی کی تقرری کی جائے یا پاکستانی فزیو کو ذمہ داری سونپی جائے۔

وقار یونس گذشتہ سال جون میں دوسری مرتبہ پاکستانی ٹیم کے کوچ بنے تھے۔ ان کی کوچنگ میں پاکستانی ٹیم نے آسٹریلیا، بنگلہ دیش، سری لنکا اور انگلینڈ کے خلاف ٹیسٹ سیریز جیتی ہیں، نیوزی لینڈ کے خلاف ٹیسٹ سیریز برابر رہی جبکہ سری لنکا کے خلاف ایک ٹیسٹ سیریز ہاری ہے۔

وقار یونس کی کوچنگ میں پاکستانی ٹیم کی ون ڈے میں کارکردگی اچھی نہیں رہی ہے اور وہ نو میں سے چھ ون ڈے سیریز ہار چکی ہے۔

گذشتہ ورلڈ کپ میں پاکستانی ٹیم کو کوارٹرفائنل میں شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا۔

اسی بارے میں