’تمائشائی کچھ بھی کہیں توجہ کھیل پر ہو‘

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption پاکستانی فاسٹ باولر محمد عامر دورہ نیوزی لینڈ میں پاکستان کی ٹیم میں شامل ہیں

پاکستانی کرکٹ ٹیم کے منیجر انتخاب عالم نے سپاٹ فکسنگ میں سزا یافتہ فاسٹ بولر محمد عامر کو مشورہ دیا ہے کہ نیوزی لینڈ کے دورے میں اگر تماشائیوں کی جانب سے ان پر فقرے کسے جائیں تو انھیں اس جانب بالکل توجہ نہیں دینی ہے۔

پاکستانی کرکٹ ٹیم تین ون ڈے اور تین ٹی 20 انٹرنیشنل میچ کھیلنے کے لیے دس جنوری کو نیوزی لینڈ روانہ ہو رہی ہے۔

نیوزی لینڈ نے محمد عامر کو ویزا جاری کر دیا ہے اور پاکستان کرکٹ بورڈ کو ان کے آسٹریلوی ٹرانزٹ ویزے کا انتظار ہے۔

پاکستانی کرکٹ ٹیم کے فٹنس کیمپ کے اختتام پر منیجر انتخاب عالم نے کہا کہ ان کی محمد عامر سے بہت تفصیلی بات ہوئی ہے اور انھوں نے محمد عامر کو اچھی طرح سمجھایا ہے کہ صرف اور صرف اپنے کھیل پر توجہ رکھنی ہے اگر تماشائیوں کی طرف سے فقرے کسے جاتے ہیں تو ان پر دھیان نہیں دینا۔

انتخاب عالم نے کہا کہ محمد عامر کا بولنگ کرتے ہوئے جارحانہ انداز برقرار رہنا چاہیے لیکن دوسری چیزوں کو انھیں نظرانداز کرنا چاہیے۔

انتخاب عالم نے کہا کہ محمد حفیظ اور اظہر علی سے ان کی بات نہیں ہوسکی ہے کیونکہ یہ دونوں قائداعظم ٹرافی کا فائنل کراچی میں کھیل رہے تھے لیکن محمد عامر کے بارے میں دونوں کرکٹرز کے تحفظات اب ختم ہو چکے ہیں اور انھیں یقین ہے کہ اب کوئی مسئلہ نہیں ہے۔

پاکستانی ٹیم کے منیجر نے توقع ظاہر کی کہ خدا نے محمد عامر کو نئی زندگی دی ہے کھیلنے کا دوبارہ موقع دیا ہے مستقبل میں ان کی طرف سے دوبارہ کوئی غلط حرکت نہیں ہوگی۔

انھوں نے کہا کہ ڈسپلن پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جاتا اور کھلاڑیوں کو بتایا جاتا ہے کہ ڈریسنگ روم کا ماحول اچھا ہوگا تو ان کی کارکردگی بھی اچھی رہے گی۔

اسی بارے میں