جوہانسبرگ میں انگلینڈ کی فتح، سیریز بھی انگلینڈ کے نام

تصویر کے کاپی رائٹ AFP

انگلینڈ نےجوہانسبرگ میں کھیلے گئے تیسرے ٹیسٹ میچ میں جنوبی افریقہ کو سات وکٹوں سے ہرا کر ٹیسٹ اور سیریز اپنےنام کر لی ہے۔ جنوبی افریقہ کی ٹیم اپنی دوسری اننگز میں صرف 83 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی اور اس طرح انگلینڈ کو میچ جیتنے کے لیے 73 رنز کا ٹارگٹ ملا جو اس نے تین وکٹوں کے نقصان پر پورا کر لیا۔

سٹوارٹ براڈ نے تباہ کن بولنگ کرتے ہوئے بارہ اوروں میں صرف 17 رنز دے کر چھ کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

جنوبی افریقہ نے جب چھ رنز کی برتری کے ساتھ اپنی دوسری اننگز شروع کی تو اس کی پہلی وکٹ 23 کے مجموعی سکور پر گری جس کے بعد جنوبی افریقہ کے کھلاڑی یکے بعد دیگرے آؤٹ ہوتے گئے اور پانچ وکٹیں صرف بارہ رنز کے اضافے پرگر گئیں اور اس طرح پوری ٹیم 83 رنز پر آؤٹ ہو گئی۔

ہاشم آملہ نے پانچ، کپتان اے بی ڈیویلیرز بغیر کوئی رن بنائےآؤٹ ہو گئے۔جنوبی افریقہ کی جانب سب سے زیادہ سکور نوجوان فاسٹ بولر گاغیسو ربادہ نے بنایا جنھوں نے 16 رنز سکور کیے۔

اس سے قبل سنیچر کو انگلینڈ نے 238 رنز پانچ کھلاڑی آؤٹ سے اننگز کا دوبارہ آغاز کیا تو اس کی آخری پانچ وکٹیں صرف 85 رنز کے اضافے پر گر گئیں۔

جنوبی افریقہ کی جانب سے کگیسو ربادہ نے عمدہ بولنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے پانچ انگلش بلے بازوں کو آؤٹ کیا۔ ان کے علاوہ مورنے مورکل نے تین، کرس مورس اور ویلجوئن نے ایک، ایک وکٹ حاصل کی۔

جو روٹ 110 اور جانی بیرسٹو 45 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔ دونوں کھلاڑیوں نے چھٹی وکٹ کی شراکت میں 40 رنز بنائے اور دونوں ربادہ کے ہاتھوں آؤٹ ہوئے۔

انگلینڈ کو اپنی پہلی اننگز میں چھ رنز کی برتری حاصل ہوگئی تھی تاہم کھانے کے وقفے تک جنوبی افریقہ نے اپنی دوسری اننگز میں بغیر کسی نقصان کے 16 رنز بنائے تھے۔ اس طرح میزبان ٹیم کو چھ رنز کی برتری حاصل ہوگئی ہے۔

اس سے قبل جنوبی افریقہ نے اپنی پہلی اننگز میں 313 رنز بنائے تھا۔ میزبان ٹیم کی جانب سے پہلی اننگز میں کوئی بھی بلے باز نصف سنچری تک سکور نہیں کر پایا۔

ڈین ایلگار 46 اور ہاشم آملہ 41 رنز کے ساتھ نمایاں رہے۔

واضح رہے کہ انگلینڈ کو چار ٹیسٹ میچوں کی سیریز میں ایک صفر کی برتری حاصل ہے۔

اسی بارے میں