فٹبال کی عالمی تنظیم فیفا کا صدراتی انتخاب آج

Image caption صدارتی عہدے کے لیے پانچ اہم امیدوار میدان میں ہیں جن کا تعلق یورپ، افریقہ اور مشرق وسطی ہے

فٹبال کی عالمی تنظیم فیفا کے صدراتی انتخاب کے لیے سوئٹزر لینڈ کے شہر زیورخ میں دنیا بھر کے 207 مندوبین جمع ہورہے ہیں جو جمعے کو ہی تنظیم کا نیا صدر منتخب کریں گے۔

نئے صدر سیپ بلیٹر کی جگہ لیں گے جنہیں ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزیوں کے کے سبب معطل کر دیا گيا تھا۔

79 سالہ بلیٹر سنہ 1998 سے اس عہدے پر فائز رہے ہیں۔ انھوں نے تنظیم میں بدعنوانی کے بحران کا حوالہ دیکر گذشتہ برس اپنے عہدے سے مستعفی ہونے کی بات کہی تھی۔

فیفا کے معطل شدہ صدر سیپ بلیٹر اور یوئیفا کے سربراہ میشل پلاٹینی پر ضابطہ اخلاق سے متعلق تحقیقات کے بعد آٹھ سال کی پابندی عائد ہے۔

یہ دونوں افراد فٹبال سے متعلق کسی بھی سرگرمی میں حصہ نہیں لے سکتے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption فیفا کی جو موجودہ صورت حال ہے اس تناظر میں ان انتخابات کی بڑی اہمیت کیونکہ آنے والے صدر کو تنظیم کی ساکھ ہی بہتر نہیں کرنی ہوگی بلکہ نت نئی اصلاحات بھی کرنی ہوں گی

انتخابی عمل کی شروعات شام کو ہونے کی امید ہے لیکن نتائج آنے سے قبل کئی دور کی ووٹنگ ہونے کی توقع ہے تبھی کون نیا صدر ہوگا پتہ چلے سکےگا۔

صدارتی عہدے کے لیے پانچ اہم امیدوار میدان میں ہیں جن کا تعلق یورپ، افریقہ اور مشرق وسطی ہے۔

یہ ہیں شیخ سلمان بن ابراہیم الخلیفہ، جیانی انفینٹیانو، شہزادہ علی بن الحسین، ٹوکیو سیکسوالے اور جیرمی شیمپیئن ہیں۔

40 سالہ شہزادہ علی بن الحسین کا تعلق اردن سے ہے اور کنگ عبداللہ کے بھائی ہیں۔ وہ اس وقت اردن کی فٹبال ایسو سی ایشن کے صدر ہیں۔

57 برس کے جیرمی شیمپیئن کا تعلق فرانس سے ہے جو ماضی میں فرانس کی جانب سے فیفا میں نمائندگی کر چکے ہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption شیخ سلمان بن ابراہیم الخلیفہ کا تعلق بحرین سے ہے اور وہ ایشیئن فٹبال کنفیڈریشن کے صدر ہیں

45 سالہ جیانی انفینٹیانو کا تعلق سوئٹزر لینڈ سے ہے اور وہ یوروپی فٹبال ایسوسی ایشن کے جنرل سیکریٹری ہیں۔

50 سالہ شیخ سلمان بن ابراہیم الخلیفہ کا تعلق بحرین سے ہے اور وہ ایشیئن فٹبال کنفیڈریشن کے صدر ہیں اور انہیں اہم امید وار مانا جارہا ہے۔

ٹوکیو سیکسوالے کا تعلق جنوبی افریقہ سے ہے جو ملک کے سابق وزیر ہیں اور وہ نیلسن منڈیلا کے ساتھ جیل میں بھی رہ چکے ہیں۔

فٹبال کی عالمی تنظیم فیفا کی جو موجودہ صورت حال ہے اس تناظر میں ان انتخابات کی بڑی اہمیت کیونکہ آنے والے صدر کو تنظیم کی ساکھ ہی بہتر نہیں کرنی ہوگی بلکہ نت نئی اصلاحات بھی کرنی ہوں گی۔

تنظیم پر جہاں بدعنوانی کے الزامات لگتے رہے وہیں ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزیاں بھی ہوتی رہی ہیں اور ان تمام معاملات میں اب تک قابو نہیں پایا گیا ہے۔

اسی بارے میں