انڈیا سے جیتے نہیں، ایڈن گارڈنز میں ہارے نہیں

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption پاکستان کی جانب سے محمد عامر انڈیا کے خلاف اہم بولر سمجھے جا رہے ہیں

آئی سی سی ورلڈ 20 کے سپر 10 مرحلے میں سنیچر کو پاکستان اور انڈیا کی ٹیمیں ایک بڑے میچ میں مدِمقابل ہو رہی ہیں۔

کولکتہ کے ایڈن گارڈنز میں کھیلا جانے والا یہ میچ پاکستانی وقت کے مطابق شام سات بجے شروع ہوگا۔

ابتدائی طور پر یہ میچ دھرم شالا میں کھیلا جانا تھا تاہم سکیورٹی خدشات کی بنا پر اس میچ کو کولکتہ منتقل کر دیا گیا تھا۔

اس سے قبل پاکستان اور انڈیا کے درمیان ورلڈ ٹی20 مقابلوں میں چار بار آمنا سامنا ہو چکا ہے جس میں انڈیا ہی فاتح رہا ہے۔

جبکہ مجموعی طور پر آئی سی سی ورلڈ ٹی20 اور ورلڈکپ مقابلوں میں دیکھا جائے تو یہ دونوں ٹیمیں دس بار ایک دوسرے کے مدِ مقابل آچکی ہیں جن میں سے پاکستان ایک بار بھی کامیابی حاصل نہیں کر پایا ہے۔

دوسری جانب ایڈن گارڈنز کے میدان پر پاکستان کا انڈیا کے خلاف مختصر اوورز کی کرکٹ میں ریکارڈ اچھا رہا ہے۔ پاکستان اب تک انڈیا کے خلاف مختصر کرکٹ میں کوئی بھی میچ ایڈن گارڈنز میں نہیں ہارا ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Other
Image caption پاکستانی بولرز کے لیے وراٹ کوہلی سب سے بڑا ہدف ہوں گے

اب دیکھنا یہ ہے کہ کیا پاکستان ورلڈٹی20 مقابلوں میں بھارت سے نہ جیتے کی روایت برقرار رکھتا ہے یا ایڈن گارڈنز میں نہ ہارنے کی۔

آخری بار پاکستان نے انڈیا کے خلاف انڈیا ہی میں ٹی20 میچ سنہ 2012 میں کھیلا تھا۔ جس میں پاکستان کو 11 رنز سے شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا۔

ورلڈ ٹی 20 میں سب سے زیادہ وکٹیں حاصل کرنے کا ریکارڈ بنانے کے لیے پاکستان ٹیم کے کپتان شاہد آفریدی کو دو وکٹوں کی ضرورت ہے۔ یہ ریکارڈ سری لنکا کے فاسٹ بولر لیستھ ملینگا کے پاس ہے جو ان فٹ ہو کر وطن واپس روانہ ہو چکے ہیں۔

انڈیا کے خلاف کھیلے جانے والے اس میچ میں پاکستان کی جانب سے فاسٹ بولر محمد عامر، محمد عرفان اور لیگ سپنر شاہد آفریدی بولنگ میں اور بیٹنگ میں محمد حفیظ، احمد شہزاد اور عمر اکمل اہم کھلاڑی سمجھے جا رہے ہیں۔

جبکہ انڈیا کے لیے ویراٹ کوہلی، روہت شرما اور مہندر سنگھ دھونی جبکہ بولنگ میں روی چندرن ایشون، اشیش نہرا اور جسپریت بھمرا اہم کھلاڑی ہوں گے۔

اسی بارے میں