نیوزی لینڈ نے بنگلہ دیش کو 75 رنز سے شکست دے دی

تصویر کے کاپی رائٹ AP

آئی سی سی ورلڈ ٹی ٹوئنٹی کے ہفتے کو کھیلے جانے والے پہلے میچ میں نیوزی لینڈ نے بنگلہ دیش کو 75 رنز سے شکست دے دی اور پول میچوں میں ناقابل شکست رہی۔

نیوزی لینڈ نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ نیوزی لینڈ نے مقررہ 20 اوورز میں آٹھ وکٹوں کے نقصان پر 145 رنز بنائے۔

جواب میں بنگلہ دیش کی ٹیم 15.3 اوورز میں 70 رنز بنا کر ڈھیر ہوگئی۔

تفصیلی سکور کارڈمیچ کی تصاویر

بنگلہ دیش کی جانب سے سب سے زیادہ سکور سواگتا ہوم نےکیا۔ وہ 16 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے۔

دوسرے اوور ہی میں بنگلہ دیش کو نقصان اٹھانا پڑا جب تمیم تین رنز بنا کر رن آؤٹ ہوئے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP

چھٹے اوور میں آسٹریلیا کو ایک اور کامیابی ملی جب میک کلینیگھن نے متھن کو 11 رنز پر بولڈ کیا۔

آٹھویں اوور میں شکیب الحسن دو رنز بنا کر سینٹنر کی گیند پر کیچ آؤٹ ہوئے۔

نویں اوور کی پانچویں گیند پر میک کلم کی گیند پر سینٹنر نے شاندار کیچ پکڑ کر شبیر کو 12 رنز پر آؤٹ کیا۔

10 ویں اوور کی آخری گیند پر سودی نے سرکار کو چھ رنز پر آؤٹ کیا۔

اگلے ہی اوور کی چوتھی گیند پر مشفیق ایلیئٹ کی گیند پر بولڈ ہوگئے۔ انھوں نے ایک رن بنایا۔

12 ویں اوور میں سودی نے محمود اللہ کو پانچ رنز پر آْؤٹ کیا۔

15 ویں اوور میں ایلیئٹ نے مشرفی کو تین رنز پر ایل بی ڈبلیو کیا۔ اسی اوور میں مستفیظ چھ رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP

اس سے قبل بنگلہ دیش نے عمدہ بولنگ کا مظاہرہ کیا۔ بنگلہ دیش کی جانب سے مستفیض الرحمان نے چار اوورز میں 22 رنز دے کر پانچ وکٹیں حاصل کیں۔

نیوزی لینڈ کی جانب سے آٹھ میں سے چھ بلے باز بولڈ ہوئے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP

پہلے آؤٹ ہونے والے کھلاڑی نکولس تھے جو سات رنز بنا کر مستفیض الرحمان کی گیند پر کلین بولڈ ہوئے۔

کین ولیمسن نے 42 رنز کی اننگز کھیلی اور انھیں بھی مستفیض الرحمان نے بولڈ کیا۔

کولن منرو آؤٹ ہونے والے تیسرے بلے باز تھے جنھوں نے 35 رنز بنائے اور وہ بھی اونچی شاٹ لگانے کی کوشش میں کلین بولڈ ہوئے۔

نیوزی لینڈ کی جانب سے اینڈرسن بغیر کوئی رن بنائہ مشرفی کی گیند پر بولڈ ہوئے جبکہ ایلیئٹ صرف نو رنز بنا کر کیچ آؤٹ ہوئے۔

ٹیلر نے 24 گیندوں میں 28 رنز بنائے اور کیچ آؤٹ ہوئے۔

مستفیض نے سینٹنر اور میک کلم کو آگے پیچھے آؤٹ کیا اور آخری گیند پر ہیٹ ٹرک پر تھے۔ تاہم میک کلینیگھن نے آخری گیند پر چھکا مارا۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption نکولس کو مارٹن گپٹل کی جگہ ٹیم میں شامل کیا گیا تاہم وہ سات رنز ہی بنا سکے

نیوزی لینڈ کی ٹیم اب تک اپنا کوئی میچ نہیں ہاری ہے جبکہ بنگلہ دیش کی ٹیم تمام میچ ہار کر ٹورنامنٹ سے باہر ہو چکی ہے۔

نیوزی لینڈ کی ٹیم کی آج کوشش ہو گی کہ وہ پول میچوں میں ناقابل شکست رہے۔

نیوزی لینڈ پہلی ٹیم تھی جس نے انڈیا، آسٹریلیا اور پاکستان کو شکست دے کر سیمی فائنل میں اپنی جگہ بنائی۔

نیوزی لینڈ کے کپتان کین ولیمسن نے اب تک تمام میچوں میں سپنرز پر انحصار کیا ہے اور ٹرینٹ بولٹ اور ٹم ساؤدی جیسے فاسٹ بولرز کو ٹیم میں شامل نہیں کیا۔

ٹی ٹوئنٹی مقابلے

نیوزی لینڈ کا ریکارڈ

  • 88 کھیلے

  • 42 جیتے

  • 39 ہارے

  • 2 ٹائی جیتے

  • 3 ٹائی ہارے

  • 2 بے نتیجہ

نیوزی لینڈ کے بلے باز مارٹن گپٹل جنھوں نے پاکستان کے خلاف 80 رنز سکور کیے تھے کا کہنا ہے کہ ضروری نہیں ہے کہ نیوزی لینڈ کی ٹیم سکواڈ میں تبدیلی نہ کرے۔ ان کا کہنا تھا کہ ایڈن گارڈنز کی وکٹ دیکھ کر ٹیم کا فیصلہ کیا جائے گا۔

ورلڈ ٹی ٹوئنٹی مقابلے

بنگلہ دیش کا ریکارڈ

  • کھیلے 46

  • جیتے 13

  • ہارے 32

  • برابر 0

  • بے نتیجہ 1

دوسری جانب بنگلہ دیش کی ٹیم کے لیے یہ آخری موقع ہے کہ وہ تین میچوں میں شکست کے بعد ایک میچ جیتے جس کے بعد وہ واپس روانہ ہو جائے گی۔

انڈیا کے خلاف ایک رن سے شکست کے بعد کپتان مشرفی مرتضیٰ کو اپنی ٹیم کو دوبارہ کھڑا کرنا ہو گا۔

مرتضیٰ نے انڈیا سے شکست کے بعد کہا ’جیت سے اتنی قریب آ کر شکست کے بعد اگلا میچ مشکل ہوتا ہے۔ لیکن ہمیں اپنا آخری میچ جم کر کھیلنا ہے۔‘

اسی بارے میں