ششانک منوہر آئی سی سی کے نئے چیئرمین منتخب

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption ششانک منوہر اس سے قبل بی سی سی آئی کے صدر تھے

انڈین بورڈ آف کنٹرول فار کرکٹ کے سابق صدر ششانک منوہر انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کے بلامقابلہ چیئرمین منتخب ہو گئے ہیں۔

انھیں جعرات کو بورڈ کے اتفاق رائے سے اس عہدے پر منتخب کیا گیا۔

آئی سی سی کی کونسل آئینی ترامیم منظور کر رہی ہے جن کے تحت صدر کا عہدہ ختم کر دیا گیا تھا۔

ششانک منوہر نے منگل کو بورڈ آف کنٹرول فار کرکٹ ان انڈیا یعنی بی سی سی آئی کے صدر کے عہدے سے استعفیٰ دیا تھا۔ ششانک منوہر کرکٹ کی گورننگ باڈی کے منتخب ہونے والے پہلے خود مختار چیئرمین ہیں اور وہ اپنی دو سالہ مدت کا آغاز جلد کریں گے۔

انتخابی مرحلے کے مطابق آئی سی سی کے ڈائریکٹروں کو ایک امیدوار نامزد کرنے کی اجازت تھی، جو موجودہ یا سابقہ آئی سی سی ڈائریکٹر رہے ہوں۔

نامزد افراد جنھیں دو یا زیادہ فل ممبر ڈائریکٹروں کی حمایت حاصل ہو، وہ اس انتخاب میں حصہ لے سکتے تھے اور ابتدائی طور پر اس تمام مرحلے کی تکمیل کی آخری تاریخ 23 مئی رکھی گئی تھی۔

تاہم چونکہ ششانک منوہر اس عہدے کے لیے نامزد ہونے والے واحد امیدوار تھے اس لیے بورڈ نے انھیں اتفاق رائے سے منتخب کر لیا۔ اس عمل کے نگران اور آزاد آڈٹ کمیٹی کے چیئرمین عدنان زیدی نے انتخابی مرحلے کے مکمل ہونے کا اعلان کر دیا ہے۔

ششانک منوہر انڈیا کے جانے مانے وکیل ہیں۔ وہ اس سے قبل سنہ 2008 سے 2011 تک بی سی سی آئی کے صدر رہے۔ جگ موہن ڈالمیا کے انتقال کے بعد انھیں ایک بار پھر اکتوبر 2015 میں بی سی سی آئی کا صدر منتخب کیا گیا تھا۔

آئی سی سی کے چیئرمین کے عہدے پر کامیابی سے منتخب ہونے کے بعد ششانک منوہر کا کہنا تھا کہ ’اس عہدے پر منتخب ہونا میرے لیے فخر کی بات ہے جس کے لیے میں آئی سی سی کے تمام ڈائریکٹروں کا شکر گزار ہوں جنھوں نے میری قابلیت پر یقین اور اعتماد کیا۔‘

اسی بارے میں