جیمز اینڈرسن کی امپائر سے بدتمیزی، آئی سی سی کی تنبیہ

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption جیمز اینڈرسن برطانیہ کی تاریخ کے کامیاب ترین بولر ہیں اور وہ اب تک 115 ٹیسٹ میچوں میں 451 وکٹیں حاصل کر چکے ہیں

انٹرنیشنل کرکٹ کونسل نے برطانوی فاسٹ بولر جیمز اینڈرسن کو لارڈز میں سری لنکا کے خلاف کھیلے جانے والے تیسرے ٹیسٹ کے دوران امپائر سے بدتمیزی کرنے پر تنبیہ کی ہے۔

33 سالہ فاسٹ بولر کو آئی سی سی کے ضابطۂ اخلاق کی شق 2.1.1 کی خلاف ورزی کا مرتکب قرار دیا گیا ہے جس کا تعلق ’ایسے رویے سے ہے جو کھیل کی روح کے منافی ہو۔‘

اینڈرسن نے آئی سی سی کے میچ ریفری اینڈی پائی کرافٹ کی جانب سے پیش کردہ الزام کو قبول کر لیا ہے جس کے بعد اس سے اس بارے میں رسمی پوچھ گچھ نہیں کی گئی۔

٭ اینڈرسن 400 وکٹیں لینے والے پہلے برطانوی بولر بن گئے

یہ واقعہ اس وقت پیش آیا جب سری لنکا کی پہلی اننگز میں اینڈرسن امپائر ایس روی کے ساتھ بےادبی سے پیش آئے تھے۔ امپائر نے اینڈرسن کو خبردار کیا تھا کہ وہ اس وقت کریز پر موجود بلےباز رنگانا ہیراتھ کے ساتھ بدکلامی نہ کریں۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption یہ واقعہ اس وقت پیش آیا جب سری لنکا کی پہلی اننگز میں اینڈرسن امپائر ایس روی کے ساتھ بےادبی سے پیش آئے تھے

اس کے بعد میدان میں موجود امپائروں ایس روی اور راڈ ٹکر اور تھرڈ امپائر علیم ڈار نے اینڈرسن پر الزام عائد کیا۔

یہ درجہ اول کی خلاف ورزی تھی جس کی کم سے کم سزا تنبیہ ہے، جب کہ کھلاڑی پر میچ کی فیس کا نصف جرمانہ بھی عائد کیا جا سکتا ہے۔

تاہم اینڈرسن کے سلسلے میں صرف تنبیہ ہی پر اکتفا کیا گیا اور جرمانہ عائد نہیں کیا گیا۔

اینڈرسن پہلے بھی بدتمیزی کے مرتکب ٹھہرائے جا چکے ہیں۔

جیمز اینڈرسن برطانیہ کی تاریخ کے کامیاب ترین بولر ہیں۔ وہ اب تک 115 ٹیسٹ میچوں میں 451 وکٹیں حاصل کر چکے ہیں۔ وہ اس وقت آئی سی سی کی بولروں کی درجہ بندی میں 884 پوائنٹس کے ساتھ سرِ فہرست ہیں۔

اسی بارے میں