ڈونگا برازیل کے کوچ کے عہدے سے برطرف

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption ڈونگا 1994 کی ورلڈ کی فاتح برازیل ٹیم کے کپتان تھے

برازیل کے سابق کپتان ڈونگا کو کوپا امریکہ کپ سے غیرمتوقع طور پر ابتدا میں ہی نکل جانے کے سبب کوچ کے عہدے سے برطرف کر دیا گیا ہے۔

خیال رہے کہ سنہ 1994 میں برازیل کو فتح سے ہمکنار کرنے والے کپتان ڈونگا کو سنہ 2014 میں دوسری بار قومی فٹبال ٹیم کا کوچ مقرر کیا گیا تھا۔

٭ کوپا امریکہ میں اپ سیٹ، برازیل ابتدائی راؤنڈ میں باہر

لیکن میساچوسِٹس میں پیرو سے صفر کے مقابلے میں ایک گول سے شکست کے بعد ان کی ٹیم ابتدائی مرحلے میں ہی چیمپیئن شپ سے باہر ہو گئی ہے۔

اس میچ میں شکست کے بعد انھوں نے کہا کہ وہ اپنے کام کے بارے میں فکرمند نہیں ہیں کیونکہ انھیں ’صرف موت سے ڈر لگتا ہے۔‘

انھوں نے 75 ویں منٹ میں کیے جانے والے پیرو کے واحد گول کے بارے میں کہا تھا کہ وہ واضح طور پر ہینڈ بال تھا۔

سنہ 1987 کے بعد ایسا پہلی بار ہوا ہے کہ برازیلین ٹیم کوپا کپ سے اتنی جلدی باہر ہوئی ہے۔

52 سالہ ڈونگا سنہ 2006 سے 2010 کے درمیان قومی ٹیم کے کوچ تھے اور ان کی نگرانی میں ٹیم سنہ 2007 میں برازیلین ٹیم کوپا کپ کی فاتح رہی تھی۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption ڈونگا کا کہنا ہے کہ پیرو کے کھلاڑی نے ہاتھ سے گول کیا تھا

اطلاعات کے مطابق کورینتھین کے مینیجر ٹیٹے کو ان کی جگہ لینے والوں میں متوقع قرار دیا جا رہا ہے۔

55 سالہ ٹیٹے نے اپنے کلب کو سنہ 2011 اور 2015 میں برازیلین سیری اے ٹائٹل حاصل کرنے میں مدد دینے کے علاوہ انھیں سنہ 2012 میں کوپا لیبرٹیڈورز اور ورلڈ کلب کپ میں بھی فتح یاب کرایا تھا۔

بہرحال جو کوئی بھی ڈونگا کی جگہ ٹیم کا کوچ مقرر ہوا، وہ برازیل کی 23 سال سے کم عمر کی ٹیم اور بارسلونا کے سٹرائکر نیمار کی کپتانی میں اگست میں ریو میں ہونے والے اولمپکس ٹیم کی کوچنگ بھی کرے گا۔

اسی بارے میں