23 طلائی تمغوں کے ساتھ مائیکل فیلپس کا الوداع

تصویر کے کاپی رائٹ AP

اولمپکس کی تاریخ کے عظیم امریکی تیراک مائیکل فیلپس نے مزید ایک طلائی تمغے کے ساتھ اپنے کریئر کا اختتام کیا ہے۔

انھوں نے برازیل کے شہر ریو ڈی جنیرو میں جاری اولمپکس مقابلے میں مزید ایک طلائی تمغہ حاصل کیا اور اس طرح مجموعی طور پر اب ان کے نام 23 طلائی تمغے ہیں۔

فیلپس نے اپنا آخری طلائی تمغہ 4x100 میٹر میڈلے ریلے میں حاصل کیا۔ برطانیہ دوسرے نمبر پر رہا جبکہ کانسی کا تمغہ آسٹریلیا کے حصے میں آیا۔

فیلپس نے اس دوڑ میں بٹر فلائی تیراکی میں حصہ لیا تھا اور یہ ریو اولمپکس میں ان کا پانچواں طلائي تمغہ ہے۔

انھوں نے اس سے قبل 4x200 فری سٹائل ریلے، 200 میٹر، بٹر فلائی، 4x100 میٹر میڈلے ریلے، 4x100 میٹر فری سٹائل ریلے اور 200 میٹر انفرادی میڈلے میں طلائی تمغے حاصل کیے۔ اس کے علاوہ انھوں نے 100 میٹر بٹر فلائی میں نقرئی یعنی چاندی کا تمغہ حاصل کیا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption رواں اولمپکس میں شمولیت سے قبل بھی فلپس سب سے زیادہ تمغہ حاصل کرنے والے کھلاڑی تھے

انھوں نے پانچ اولمپکس میں حصہ لیا اور مجموعی طور پر 23 طلائی، تین چاندی اور دو کانسی کے تمغے کے ساتھ اپنے کریئر کو خیرباد کہا۔

انھوں نے اس مقابلے سے قبل اپنے ریٹائرمنٹ کا اعلان کر دیا تھا۔ اس سے قبل انھوں نے لندن اولمپکس میں بھی ریٹائرمنٹ کا اعلان کیا تھا لیکن پھر دو سال بعد انھوں نے عالمی مقابلوں میں واپسی کی تھی۔

اس سے قبل امریکہ نے خواتین کے 4x100 میٹر میڈلے ریلے میں بھی طلائی تمغہ حاصل کیا تھا اور وہ امریکہ کی تاریخ کا ہزارواں طلائی تمغہ تھا۔