میڈل کے ساتھ ساتھ شادی کی پیشکش

دنیا میں لوگ شادی کی پیشکش کے لیے بہت سے اہم مواقع کا انتخاب کرتے ہیں اور چینی ڈائیور ہے زی کے بوائے فرینڈ نے اس اعلان کے لیے ریو میں جاری اولمپکس کو چنا۔

ہے زی نے اتوار کو ریو میں خواتین کے تین میٹر سپرنگ بورڈ مقابلے میں چاندی کا تمغہ جیتا تھا۔

تاہم انھیں اس سے بڑی خوشی اس وقت ملی جب میڈل دیے جانے کی تقریب کے بعد سوئمنگ ایرینا میں موجود ہزاروں شائقین اور ٹی وی پر دیکھنے والے کروڑوں افراد کے سامنے ہے زی کے بوائے فرینڈ اور چینی ڈائیونگ ٹیم کے رکن چن کے نے انھیں شادی کی پیشکش کر ڈالی۔

گذشتہ ہفتے چین کے لیے کانسی کا تمغہ جیتنے والے چن کے کی قسمت نے یہاں بھی ان کا ساتھ دیا اور ہے زی نے ہاں کہہ دی۔

ہے زی کا کہنا تھا کہ ’ہم چھ برس سے ساتھ ہیں لیکن میرے خواب و خیال میں بھی نہیں تھا کہ وہ آج مجھے یہاں شادی کی پیشکش کرے گا۔‘

انھوں نے کہا کہ ’چن کے بہت سے باتیں کر چکے ہیں، انھوں نے بہت سے وعدے کیے ہیں لیکن جو بات میرے دل کو لگی ہے وہ یہ کہ میں ساری زندگی ان پر اعتبار کر سکتی ہوں۔‘

چن نے شادی کی پیشکش کے لیے تمغے دیے جانے کی تقریب کا انتخاب کیا اور جب ان کی گرل فرینڈ کو چاندی کا تمغہ مل چکا تو وہ انگوٹھی لیے آگے بڑھے اور ہے زی کے سامنے گھٹنا ٹیک کر انھیں شادی کی پیشکش کر دی۔

اس موقع کو وہاں موجود درجنوں کیمرہ مینز نے اپنے کیمروں میں محفوظ کر لیا اور ابتدا میں تو ہے زی نے اپنے ہاتھ سے چہرہ چھپا لیا اور چند لمحوں کے انتظار کے بعد انھوں نے یہ پیشکش قبول کر لی۔

اس کے بعد چن نے ہے کو انگوٹھی پہنائی اور دونوں ایک دوسرے کے گلے لگ گئے۔

لیکن شادی کی اس پیشکش پر سوشل میڈیا پر ملا جلا ردعمل دیکھنے کو ملا۔

بی بی سی کے فیس بک صفحے پر کچھ صارفین کا خیال تھا کہ اس پیشکش نے ہے زی کی اولمپک میڈل جیتنے کی اہمیت پسِ پردہ چلی گئی تاہم کچھ لوگوں کا یہ بھی کہنا تھا کہ اس نے اس خوشی کو دوبالا کر دیا۔