جنوبی افریقہ آسٹریلیا سیریز، ’جملے کسنے کی جنگ ہوگی‘

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption ڈیرن لیمن نے بتایا کہ اس سیریز کے لیے نوجوان کھلاڑیوں کا انتخاب کیا گیا ہے کہ تاکہ ٹیسٹ کرکٹ کھیلنے والے کھلاڑیوں کو آرام دیا جا سکے

آسٹریلوی کرکٹ ٹیم کے کوچ ڈیرن لیہمن نے کہا ہے کہ جنوبی افریقہ کے خلاف پانچ ایک روزہ میچوں کی سیریز میں دونوں ٹیموں کی جانب سے (سلیجنگ) فقرے کسے جائیں گے۔

یہ بات آسٹریلوی کوچ ڈیرن لیہمن نے بدھ کے روز جنوبی افریقہ کے درمیان 30 ستمبر سے شروع ہونے والی پانچ ایک روزہ میچوں کی سیریز کے لیے جنوبی افریقہ پہنچنے کے بعد صحافیوں سے بات کرتے ہوئے کہی۔

ڈیرن لیہمن کا ماننا ہے کہ ’ون ڈے میچوں کی ٹیم ٹیسٹ ٹیم کے مقابلے میں مختلف ہے اور وہ زیادہ فقرے کسنے کی جانب مائل ہیں۔‘

خبر رساں ادارے اے ایف پی کے مطابق ڈیرن لیہمن نے صحافیوں کو یقین دلایا کہ ’میرے خیال میں یہ ایک زبردست سیریز ہوگی کیونکہ آسٹریلیا کی ون ڈے ٹیم میں شامل کھلاڑی میدان پر بہت زیادہ بولتے ہیں۔‘

ان کا کہنا تھا کہ ’ان دونوں ٹیموں میں ایک چیز بہت اچھی ہے اور یہ کہ دونوں ہی ٹیمیں میدان پر سخت کرکٹ کھیلتی ہیں۔‘

’میرے خیال میں اس سیریز کے دوران میدان پر جملے کسنے سے دونوں ٹیموں کو کوئی مسئلہ نہیں ہوگا۔‘

ڈیرن لیہمن نے بتایا کہ اس سیریز کے لیے نوجوان کھلاڑیوں کا انتخاب کیا گیا ہے کہ تاکہ ٹیسٹ کرکٹ کھیلنے والے کھلاڑیوں کو آرام دیا جا سکے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption آسٹریلین کرکٹ ٹیم میدان پر مخالف ٹیم پر جملے کسنے میں ماہر سمجھی جاتی ہے

’ہم ون ڈے ٹیم میں رد و بدل کرتے رہتے ہیں تاکہ آپ اپنے ٹیسٹ کرکٹ کے کھلاڑیوں کو وقت دے سکیں۔‘

خیال رہے کہ آسٹریلوں ٹیم میدان پر جملے کسنے کے لیے خاصی شہرت رکھتی ہے۔ تاہم حال ہی میں سری لنکا کے خلاف کھیلی جانے والی تین ٹیسٹ میچوں کی سیریز میں آسٹریلیا کی جانب سے ایسا دکھائی نہیں دیا تھا۔ شاید اس کی وجہ وہ دباؤ تھا جو سری لنکن ٹیم نے پوری سیریز کے دوران آسٹریلیا پر بنائے رکھا۔

اس سریز میں آسٹریلیا کو تینوں ٹیسٹ میچوں میں شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا۔

ڈیرن لیہمن نے بتایا کہ فاسٹ بولر جاش ہیزلوڈ اور مچل سٹارک کو جنوبی افریقہ کے خلاف سیریز میں آرام دیا گیا ہے اور ان کی جگہ تین نئے کھلاڑیوں کو موقع دیا گیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ’ہماری تمام تر توجہ آئندہ سال ہونے والی چیمپیئنز ٹرافی اور 2019 کے ورلڈ کپ پر مرکوز ہے۔‘

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں