BBCUrdu.com
  •    تکنيکي مدد
 
پاکستان
انڈیا
آس پاس
کھیل
نیٹ سائنس
فن فنکار
ویڈیو، تصاویر
آپ کی آواز
قلم اور کالم
منظرنامہ
ریڈیو
پروگرام
فریکوئنسی
ہمارے پارٹنر
آر ایس ایس کیا ہے
آر ایس ایس کیا ہے
ہندی
فارسی
پشتو
عربی
بنگالی
انگریزی ۔ جنوبی ایشیا
دیگر زبانیں
 
وقتِ اشاعت: Wednesday, 23 April, 2008, 08:04 GMT 13:04 PST
 
یہ صفحہ دوست کو ای میل کیجیئے   پرِنٹ کریں
کیا کرکٹ کا مزاج بدل رہا ہے؟
 
چیئر لیڈر شائقین کی توجہ کو مرکز بنی ہوئی ہیں( فوٹو سندیپن چٹرجی، انڈین ایکسپریس)

انڈین پریمئیر لیگ کا ٹونٹی ٹونٹی ٹورنامنٹ بھلے ہی کامیابی کی بلندیوں کو چھو رہا ہو لیکن شائقین کو رجھانے کے لیے جو طریقے استعمال کیے جارہے ہیں وہ کرکٹ کی روایتی امیج سے ہم آہنگ نہیں۔

کھیل کے دوران کہیں بالی وڈ کے عظیم ستارے ناچتے گاتے نظر آتے ہیں تو کہیں سٹنٹ کرتے ہوئے۔ چھوٹے سے چھوٹے اور کم سے کم کپڑوں میں ملبوس امریکی حسینائیں( چئر لیڈرز) ناچ ناچ کر جشن کا سا ماحول قائم رکھنے کی کوشش کرتی ہیں۔

یہ بات اور ہے کہ انہیں شاید کرکٹ کی بالکل سمجھ نہ ہو۔ اور شائقین بھی ٹوینٹی ٹوینٹی کی مار دھاڑ کے درمیان اس چمک دھمک کا بھرپور مزہ لیتے ہیں۔ کبھی کبھی تو کرکٹ سے بھی زیادہ۔

چیئر لیڈرز میں دلچسپی
 بنگلور میں سٹینڈز میں موجود شائقین میچ میں کم اور چئر لیڈرز میں زیادہ دلچسپی دکھا رہے تھے۔ بالی وڈ کے گانےگا کر وہ چئر لیڈرز کو اپنے ساتھ ناچنے کی دعوت دیتے سنائی دیے
 

بنگلور میں سٹینڈز میں موجود شائقین میچ میں کم اور چئر لیڈرز میں زیادہ دلچسپی دکھا رہے تھے۔ بالی وڈ کے گانےگا کر وہ چئر لیڈرز کو اپنے ساتھ ناچنے کی دعوت دیتے سنائی دیے۔

ممبئ میں شائقین کا اسرار تھا: ’ میڈم، میڈم، شیک ہینڈ، شیک ہینڈ‘۔

دو ٹیمیں بالی وڈ سٹارز نے خریدی ہیں۔ کلکتہ نائٹ رائڈرز اور کنگز الیوں پنجاب۔ اور ان ٹیموں کے مالک شاہ رخ خان اور پریتی زنٹا ہر جگہ نظر آتے ہیں۔

ہندوستان میں کرکٹ ایک جنون ہے اور جب بالی وڈ کے عظیم ترین ستارے بھی زمین پر اتر آئیں تو نشا دوبالا ہوجاتاہے۔ کلکتہ میں ایک میچ کے دوران ایک ادھیڑ عمر کا شخص اوپر والے سٹینڈز سے کود گیا۔ کرکٹ کے نشے میں نہیں بلکہ شاہ رخ کو قریب سے دیکھنے کے لیے۔ جان تو بچ گئی لیکن ہڈیاں نہیں۔

پریتی اور شاہ رخ جم کر میدان میں اترے ہیں

اپنی ٹیموں کو پروموٹ کرنے کے لیے شاہ رخ اور دوسری ٹیموں کے مالکان جس کسی کو گھسیٹ کر لاسکتے ہیں، لاتے ہیں۔ تو کسی میچ میں راہل اور پرینکا گاندھی نظر آئیں گے، تو کسی میں اپنے حیرت انگیز اور خطرناک کرتب دکھاتے ہوئے اکشے کمار۔ اور چھوٹے موٹے ستاروں، موسیقاروں اور فیشن ڈیزائنروں کی تو کوئی گنتی ہی نہیں۔

سرکس کا سا ماحول نظر آتا ہے۔ لیکن اب یہ سوال بھی اٹھنا شروع ہوگیا ہے کہ کیا شائقین اپنے شہروں کی ٹیموں کی اسی انداز میں حمایت کریں گے جیسے یورپ میں فٹبال کی ٹیموں کو حاصل ہوتی ہے۔ کیونکہ اگر ایسا نہیں ہوتا تو صرف ناچ گانے کے سہارے میدانوں کو بھرنا آسان نہیں ہوگا۔

کرکٹ کو زیادہ دلچسپ بنانے کی دلیل تو سمجھ میں آتی ہے لیکن اس کے لیے جو طریقہ کار استعمال کیا گیا ہے، اس سے سب اتفاق نہیں کرتے۔

تنقید کرنے والوں میں روایتی کرکٹ پسند کرنے والوں کے ساتھ ساتھ سابق فلم سٹار شترو گھن سنہا بھی شامل ہیں۔ ان کے نشانے پر شاہ رخ خان ہیں اور چئر لیڈر لڑکیاں، جو ان کے خیال میں عریانیت پھیلا رہی ہیں۔

پرینکا گاندھی بھی میچ دیکھنے پہنچیں

جو لوگ روایتی طرز کی کرکٹ پسند کرتے ہیں ان کا خیال ہے کہ اس ناچ گانے سے کرکٹ اور بالی وڈ کی کھچڑی پک رہی ہے۔

لیکن بنگلور کی ٹیم کے مالک وجے ملیا کہتے ہیں کہ اس تفریح سے کھیل کو فائدہ ہوگا۔

’اولمپکس کی افتتاحی تقریب دیکھیں یا امریکی بیس بال کے میچ۔ ان میں گلیمر اور تفریح دونوں ہوتے ہیں۔ ہندوستان میں بھی ہم کرکٹ میں گلیمر بڑھا رہے ہیں۔‘

منتظمین کا بھی دعوی ہے کہ کرکٹ اور تفریح کا یہ امتزاج کھیل کو ہمیشہ کے لیے بدل دے گا۔ دیکھنا صرف یہ ہے کہ کس سمت میں۔

 
 
بالی وڈ بازی لےگیا
میچ آئی پی ایل کا مگر مردِ میدان شاہ رخ خان
 
 
مصباح الحق آئی پی ایل نیلامی
مصباح پچاس لاکھ میں یوسف کا خریدار نہیں
 
 
کروڑوں کا کھیل
آئی پی ایل کے کروڑوں رویے واپس کیسےہونگے
 
 
پاکستانی کھلاڑی کھلاڑی احتیاط برتیں
آئی سی سی کا پاکستانی کھلاڑیوں کو مشورہ
 
 
تازہ ترین خبریں
 
 
یہ صفحہ دوست کو ای میل کیجیئے   پرِنٹ کریں
 

واپس اوپر
Copyright BBC
نیٹ سائنس کھیل آس پاس انڈیاپاکستان صفحہِ اول
 
منظرنامہ قلم اور کالم آپ کی آواز ویڈیو، تصاویر
 
BBC Languages >> | BBC World Service >> | BBC Weather >> | BBC Sport >> | BBC News >>  
پرائیویسی ہمارے بارے میں ہمیں لکھیئے تکنیکی مدد