شراب کی لت

  1. شراب

    مشہور چینی ٹیک کمپنی علی بابا پر کیے جانے والے ایک ہائی پروفائل ریپ کیس نے حالیہ ہفتوں میں سوشل میڈیا پر ایک ہلچل مچا دی ہے جس میں ملازمین کو آفس کی پارٹیوں میں شراب پینے پر دباؤ ڈالنے کے 'زہریلے'کلچر کے بارے میں سوال اٹھایا جا رہا ہے۔

    مزید پڑھیے
    next
  2. شراب

    ایک برطانوی صحافی کو جب ایک پبلشر نے تحفے میں شراب بھیجی تو وہ برداشت نہیں کر پائیں اور انھوں نے اس سے متعلق ٹوئٹر پر ناراضدگی کا اظہار کیا جس کے بعد ایک بحث شروع ہوگئی ہے۔

    مزید پڑھیے
    next
  3. سارا میک ڈرموٹ

    بی بی سی نیوز

    بیکی

    بیکی ایلس ہیملٹن کی والدہ کو شراب نوشی کی لت تھی مگر اس کے بارے میں کوئی بھی بات نہیں کرتا تھا جس کے المناک نتائج سامنے آئے۔

    مزید پڑھیے
    next
  4. شراب کا گلاس

    انڈیا میں محکمہ موسمیات نے اگلے چند دن تک دِلی سمیت شمالی انڈیا کے متعدد علاقوں میں سردی کی شدید لہر کی پیشگوئی کرنے کے ساتھ ساتھ لوگوں سے کہا گیا ہے کہ اس دوران شراب پینے سے گریز کیا جائے۔

    مزید پڑھیے
    next
  5. لوریلئی میہالا

    بزنس رپورٹر

    Fritz-Kola being produced

    دو جرمن دوستوں نے سنہ 2003 میں ایک نیا مشروب فرٹز کولا لانچ کیا اور پھر پیچھے مڑ کر نہیں دیکھا۔

    مزید پڑھیے
    next
  6. متاثرہ

    انڈیا کی مغربی ریاست پنجاب میں زہریلی شراب پینے سے اب تک 104 افراد کی موت ہو چکی ہے۔

    مزید پڑھیے
    next
  7. People using hand sanitiser in Kolkata, India in July

    نڈیا میں جعلی شراب اور سینیٹائزر پینے کے مختلف واقعات میں کم از کم 38 افراد ہلاک ہو گئے ہیں۔ پنجاب کے چیف منسٹر کیپٹن امریندر سنگھ نے معاملے کی عدالتی تحقیقات کا حکم دیا ہے۔

    مزید پڑھیے
    next
  8. سارہ کِیٹنگ

    بی بی سی فیوچر

    شراب

    ایسی خبریں آ رہی ہیں کہ لوگ اپنی بیزاری کو جام میں ڈبونے کے لیے شراب کا سہارا لے رہے ہیں جس سے شراب کی فروخت بڑھ گئی ہے۔

    مزید پڑھیے
    next
  9. سوتک بسواس

    بی بی سی نیوز، انڈیا

    3

    گذشتہ ہفتے انڈیا کے کچھ شہروں میں کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے سخت لاک ڈاؤن میں نرمی کی گئی تو ملک بھر میں شراب کی دکانوں کے باہر لمبی قطاریں دکھائی دیں۔

    مزید پڑھیے
    next
  10. ایلن مرفی

    بی بی سی فیوچر

    اوم کار

    انڈیا میں صنفی مساوات کے لیے کام کرنے والی ایک تنظیم نوجوان لڑکوں کو ایک کورس کی مدد سے خواتین کے ساتھ مار پیٹ اور تشدد نہ کرنا اور صنف کی بنیاد پر تعصب نہ برتنا سکھا رہی ہے۔

    مزید پڑھیے
    next