گوچی اور کرسچیئن ڈیور کا دبلی پتلی ماڈلز لینے سے انکار

Models on catwalk at Christian Dior fashion show at Paris Fashion Week 2015 تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

کرسچیئن ڈیور اور گوچی جیسے برانڈز کے لیے کام کرنے والے فیشن ہاؤسز نے کہا ہے کہ وہ اپنے کیٹ والک شوز میں کم وزن والی دبلی پتلی ماڈلز کی شمولیت پر پابندی لگا دیں گے۔

دنیا کی دو بڑی فیشن کمپنیوں ایل وی ایم ایچ اور کیئرنگ نے اس اقدام کا اعلان اس تنقید کے بعد کیا کہ فیشن کی صنعت لوگوں کو مناسب خوراک نہ لینے پر اکسا رہی ہے۔

ماڈلز کو خواتین کے فرانسیسی سائز 32 سے لازماً زیادہ ہونا چاہیے، جو کہ برطانیہ کے چھ اور امریکہ کے صفر سائز کے برابر ہے۔

ان کمپنیوں نے یہ بھی کہا ہے کہ وہ بالغوں کے کپڑوں کے لیے 16 سال سے کم عمر کی ماڈلز کو استعمال نہیں کریں گے۔

کیئرنگ کےارب پتی چیئرمین فرانسوا ہنری پنالٹ نے کہا کہ ان کمپنیوں کو امید ہے کہ اس سے تمام صنعت کی حوصلہ افزائی ہو گی اور ان کی تقلید کرے گی۔

کچھ نقادین کا کہنا ہے کہ کیٹ واک ماڈل غیر صحتدامنہ اور غیر حقیقی جسم کے تصور کو اجاگر کرتی ہیں جبکہ فیشن انڈسٹری کے لوگوں کا کہنا ہے کہ دبلی پتلی ماڈلز پر ملبوسات زیادہ سجتے ہیں۔

غیر متوازن خوراک پر کام کرنے والی چیرٹی 'بیٹس' کا کہنا ہے کہ فیشن انڈسٹری کو غیرمتوازن خوراک کا مکمل ذمہ دار قراردینا صحیح نہیں ہے۔

بیٹس نے کہا ’البتہ ہم سمجھے ہیں کہ فیشن کی صنعت میں جو آئیڈلز پیش کیے جاتے ہیں وہ غیر متوازن خوراک کے مسئلے کو مزید خراب کر سکتے ہیں اور ہم صحتمندانہ جسم کی شبہیہ کی ترویج چاہتے ہیں۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption فرانس کے فیشن شو میں شریک ایک ماڈل

فرانس میں دبلی پتلی ماڈلز کے حوالے سے قانون رواں سال مئ سے لاگو ہوا ہے۔

قانون کی خلاف ورزی کرنے والی کمپنیوں کو 75 ہزار یورو تک جرمانہ یا کمپنی کے سربراہ کو چھ ماہ تک قید کی سزا سنائی جا سکتی ہے۔

اس قانون کے تحت لازم ہے کہ ماڈلز اپنے میڈیکل سرٹیفکیٹ پیش کریں کہ وہ جسمانی طور پر صحت مند ہیں اور وہ کام کے لیے فٹ ہیں۔

اسی بارے میں