مریہ سے تباہی: وزیراعظم کے گھر کی چھت ’سب سے پہلے اڑی‘

ڈومنیکا سے تباہی کا منظر تصویر کے کاپی رائٹ CEDRIK-ISHAM CALVADOS
Image caption سمندری طوفان مریہ کو کیٹیگری فائیو میں شمار کیا جا رہا ہے جو درجہ بندی میں سب سے زیادہ شدید ہے۔

سمندری طوفان ’مریہ‘ کیریبیئن جزائر کی جانب بڑھتا ہوا ڈومنیکا سے ٹکرایا ہے۔ طوفان کے سبب شدید بارشیں ہو رہی ہیں اور ڈھائی سو کلو میٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے ہوائیں چل رہی ہیں۔

ڈومنیکا کے وزیراعظم نے طوفان کو ’تباہ کن‘ قرار دیا ہے۔

وزیراعظم نے اپنی فیس بک پوسٹ میں کہا ہے کہ ان کی جس سے بھی بات ہوئی وہ یہ بتا رہا ہے کہ ان کے گھر کی چھت اڑ چکی ہے۔ وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ ان کی سرکاری رہائش گاہ کی چھت سب سے پہلے اڑی۔

تصویر کے کاپی رائٹ Facebook

کیریبیئن جزیرے ڈومنیکا کی مجموعی آبادی 70 ہزار افراد پر مشتمل ہے اور طوفان کے سبب تمام طرح کے رابطے منقطع ہونے سے خدشات بڑھ رہے ہیں۔

ڈومنیکا کے وزیراعظم روزویلٹ سکیرت نے طوفان کے وقت کے حالات اور کیفیت اور اس سے ہونے والے نقصانات کی تفصیلات فیس بک پر پوسٹ کی ہیں۔

سمندری طوفان مریہ کو کیٹیگری فائیو میں شمار کیا جا رہا ہے جو درجہ بندی میں سب سے زیادہ شدید ہے۔

وزیراعظم کا کہنا ہے کہ انھوں نے طوفان کی شدت کو واضح طور پر محسوس کیا ہے۔

اُس وقت جب تیز ہوائیں عمارت کی چھت سے ٹکرائیں تو وزیراعظم کو یہ محسوس ہوا، جیسے سب ختم ہو گیا ہے۔

وزیراعظم روزویلٹ نے فیس بک پر مفصل پوسٹ میں طوفان کو ’تباہ کن‘ قرار دیتے ہوئے کہا کہ ہواؤوں سے چھتیں اڑ گئی ہیں۔

انھوں نے لکھا کہ سب سے زیادہ خوف زدہ بات یہ ہے کہ لگاتار بارشوں سے ہونی والی لینڈ سلائیڈنگ کے نتیجے میں کئی افراد کے شدید زخمی اور ہلاک ہونے کی خبریں آ سکتی ہیں۔

وزیراعظم نے کہا کہ اُن کی ترجیح طوفان میں پھنسے ہوئے افراد کو ریسکیور کرنا اور امداد پہنچانا ہے۔

انھوں نے کہا کہ ’ہمیں مدد کی ضرورت ہے، میرے دوست ہمیں ہر طرح کی مدد کی ضرورت ہے۔‘

یاد رہے کہ سمندری طوفان ماریہ کیٹیگری پانچ کی شدت والا طوفان ہے اور اس علاقے میں آنے والے گذشتہ سمندری طوفان ارما کی مانند یہ بھی آگے بڑھتے ہوئے کریبیئن جزائر سے ٹکرا رہا ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Facebook

اسی بارے میں