شمالی کوریا امریکہ اور اتحادیوں پر حملہ کرنے کی غلطی نہ کرے: میٹس

جیمز میٹس تصویر کے کاپی رائٹ EPA

امریکہ نے شمالی کوریا کو خبردار کیا ہے کہ وہ امریکہ اور اُس کے اتحادیوں پر حملہ کرنے کی غلطی نہ کرے کیونکہ جوہری ہتھیاروں کے استعمال کا موثر اور منہ توڑ جواب دیا جائے گا۔

امریکہ کے وزیرِ دفاع جیمز میٹس نے کہا ہے کہ ان کا ملک شمالی کوریا کو کبھی بھی جوہری ملک تسلیم نہیں کرے گا۔

امریکی وزیر دفاع جنوبی کوریا کے دورے پر سیئول پہنچے ہیں، جہاں پریس کانفرنس میں جیمز میٹس نے کہا کہ پیانگ یانگ کے جوہری اور میزائل پروگرام سے اس کی سکیورٹی مضبوط نہیں ہو گی۔

شمالی کوریا امریکہ کو نشانہ بنانے کی صلاحیت کے 'انتہائی قریب': سی آئی اے

سفارت کاری اس وقت تک جاری رہے گی جب تک 'پہلا بم نہیں گرتا': ٹلرسن

امریکی وزیرِ دفاع نے واشنگٹن کے اس عزم کو دہرایا کہ وہ شمالی کوریا کے ساتھ کشیدگی کو سفارتی طریقوں سے حل کرنا چاہتا ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ شمالی کوریا کی جانب سے امریکہ یا اس کے اتحادیوں کے خلاف کسی بھی قسم کے ہتھیاروں کے استمعال کا 'بھرپور' عسکری جواب دیا جائے گا۔

خبر رساں ادارے روئٹرز کے مطابق امریکی وزیرِ دفاع جیمز میٹس نے سنیچر کو سیئول میں جنوبی کوریا کے حکام کے ساتھ ملاقات میں واضح کیا کہ امریکہ کبھی بھی شمالی کوریا کو جوہری طاقت تسلیم نہیں کرے گا۔

اسی بارے میں مزید پڑھیے

شمالی کوریا پر ایک ہی چیز کام کرے گی: ڈونلڈ ٹرمپ

دفاع پر مجبور کیا تو امریکہ کوریا کو تباہ کر دے گا: ڈونلڈ ٹرمپ

جیمز میٹس نے پیانگ یانگ کو خبردار کرتے ہوئے کہا کہ امریکہ اور جنوبی کوریا کے اتحاد کا کوئی مقابلہ نہیں ہے۔

انھوں نے کہا کہ ’شمالی کوریا امریکہ اور اُس کے اتحادیوں پر حملہ کرنے کی غلطی نہ کرے کیونکہ اُس کی جانب سے جوہری ہتھیاروں کے استعمال کا موثر اور منہ توڑ جواب دیا جائے گا۔‘

جیمز میٹس نے کہا کہ شمالی کوریا کا تیزی سے بڑھتا ہوا جوہری اور میزائل پروگرام اس کی سکیورٹی کو مضبوط نہیں کرے گا۔

خبر رساں ادارے اے ایف کے مطابق جیمز میٹس نے حالیہ بحران کو سفارت کاری کے ذریعے حل کرنے پر زور دیا۔ تاہم ان کا کہنا تھا کہ ’ہمارے سفارت کار اس وقت زیادہ موثر ہوتے ہیں جب انھیں عسکری حمایت حاصل ہوتی ہے۔‘

واضح رہے کہ حالیہ مہینوں کے دوران شمالی کوریا نے بین الاقوامی دباؤ کو نظر انداز کرتے ہوئے چھ جوہری تجربات کیے ہیں اور جاپان کے اوپر سے دو میزائل فائر کیے ہیں۔

شمالی کوریا کے جوہری پروگرام پر خطے میں کشیدگی بڑھ رہی ہے۔

اسی بارے میں