اردن میں انوکھی مہم: امریکی سفارتخانے کی سڑک کا نام ’القدس عربیہ‘ رکھا جائے

یروشلم تصویر کے کاپی رائٹ Reuters

اردن کے شہریوں نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کے فیصلے کے خلاف انوکھے احتجاج کی تجویز پیش کی ہے۔

اردن کے شہریوں نے تجویز پیش کی ہے کہ دارالحکومت عمان میں جس سڑک پر امریکی سفارتخانہ واقع ہے اس سڑک کا نام تبدیل کر کے ’عرب یروشلم سٹریٹ‘ رکھ دیا جائے۔

یہ تجویز امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے اعلان کے بعد سوشل میڈیا پر شروع کی گئی ہے۔

اس وقت عمان میں جس سڑک پر امریکی سفارتخانہ واقع ہے اس کا نام ’شارع الامويين‘ ہے۔

مزید پڑھیے

ایران: اسرائیل سے دوستی ختم کریں، سعودی عرب سے مطالبہ

’امریکہ یروشلم سے متعلق اپنا فیصلہ واپس لے‘

ترکی اور اسرائیل کے درمیان تلخ بیانات کا تبادلہ

امریکی سفارتخانہ پہلے یروشلم منتقل کیوں نہیں ہوا؟

یروشلم اسرائیل کا دارالحکومت ہے: ڈونلڈ ٹرمپ

سوشل میڈیا پر تجویز دینے والوں کا کہنا ہے کہ سڑک کا نام ’القدس عربیہ‘ میں تبدیل کرنے سے امریکی سفارتخانے کو مجبوراً ’القدس عربیہ‘ لکھنا پڑے گا۔

سڑک کا نام تبدیل کرنے کے حمایتیوں کا کہنا ہے کہ یہ مہم اس وقت سود مند ثابت ہو گی جب وہ تمام ممالک جو فلسطین کے حق میں ہیں وہ اپنے ممالک میں اس سڑک کا نام تبدیل کریں جہاں امریکی سفارتخانہ واقع ہے۔

عرب نیوز کے مطابق عمان سٹی کونسل کے رکن اسماعیل بستانجی کا کہنا ہے کہ انھوں نے ایک قرارداد تیار کی ہے جس میں شارع الامويين کا نام تبدیل کر کے القدس عربیہ رکھا جائے۔

’ہم ایسا اس لیے کرنا چاہتے ہیں تاکہ دنیا اور خاص طور پر وہ لوگ جو امریکی سفارتخانے میں کام کرتے ہیں یا وہاں جاتے ہیں کو معلوم چلے ہمارے لیے یروشلم ایک عرب شہر ہے۔‘

مصر کے سیاسی کارکن خالد داؤد کا کہنا ہے کہ انھوں نے مصر کی مختلف سیاسی جماعتوں کو یہ تجویز دی ہے اور ان کے خیال میں یہ سیاسی جماعتیں قرارداد تیار کریں گی کہ قاہرہ میں قصر الدوبارہ سڑک کا نام تبدیل کیا جائے۔

سوشل میڈیا پر جاری اس مہم کے دوران اس بات کی نشاندہی کی گئی کہ پیغام پہنچانے کے لیے سڑک کا نام تبدیل کرنا عرب دنیا میں انوکھا طریقہ نہیں ہے۔

سعودی عرب کے شہر جدہ میں امریکی قونصلیٹ ’فلسطین سٹریٹ‘ پر واقع ہے۔

کئی صارفین نے ٹویٹ کیا کہ اس سڑک کا نام شاہ فیصل نے تبدیل کر کے کے فلسطین سٹریٹ رکھا تھا۔ ٹویٹس میں مزید کہا گیا کہ یہ نام اس لیے رکھا گیا تاکہ امریکی قونصلیٹ اپنے پتے میں فلسطین کا نام لکھیں۔

فلسطین سٹریٹ کے بارے میں جو سوشل میڈیا میں کہا جا رہا ہے سچ ہے کہ نہیں؟ تاہم اس حوالے سے سوشل میڈیا پر کافی چرچا رہا۔

عمان میں شروع ہونے والی یہ مہم ہمسایہ ممالک تک بھی پہنچ گئی ہے۔

قطر سے تعلق رکھنے والے ایک ٹوئٹر صارف @sa600r نے ٹویٹ کیا ’عرب اور مسلم ممالک ہر اس سڑک کا نام فلسطین رکھ دو جہاں امریکی سفارتخانہ واقع ہے۔‘

اسی بارے میں