ساری رات پیدل چل کر کام پر پہنچنے والے ملازم کو مالک نے اپنی گاڑی دے دی

ملازم کے لیے مالک کی گاڑی تصویر کے کاپی رائٹ CBS
Image caption والٹر کار مالک سے گاڑی کی چابی لے کر آبدیدہ ہو گئے

ایک امریکی کمپنی کے مالک نے اس ملازم کو اپنی نئی گاڑی تحفے میں دے دی جو ساری رات پیدل چل کر 32 کلومیٹر دور سے نوکری کے پہلے دن کام پر پہنچا تھا۔

جب والٹر کار کی اپنی گاڑی خراب ہو گئی تو انھوں نے امریکی ریاست ایلاباما کے شہر برمنگھم کے نواحی علاقے میں واقع ایک گھر پیدل چل کر جانے کا فیصلہ کیا جہاں انھیں سامان منتقل کرنے کے لیے بلایا گیا تھا۔

راستے میں ایک پولیس اہلکار والٹر کی ہمت سے اس قدر متاثر ہوا کہ انھیں ناشتہ کروا دیا۔

جب یہ کہانی سوشل میڈیا پر پہنچی تو لوگوں نے والٹر کی تعریفوں کے پل باندھ دیے۔

والٹر بیل ہاپس نامی کمپنی میں کام کرتے ہیں جو سامان کی منتقلی کا کام کرتی ہے۔

اس کمپنی کی ایک گاہک جیمی لیمی نے فیس بک پر لکھا کہ انھیں اپنے گھر کا سامان منتقل کروانا تھا کہ دروازے کی گھنٹی بجی اور ایک پولیس اہلکار والٹر کار کے ہمراہ وہاں کھڑا تھا۔ پولیس اہلکار نے بتایا کہ والٹر تمام رات چل کر وہاں تک پہنچے تھے کیوں کہ انھیں گھر کے سامان کی منتقلی کا کام کرنا تھا۔

لیمی نے لکھا کہ انھوں نے والٹر کو کہا کہ وہ پہلے تھوڑا دم لے لیں لیکن انھوں نے انکار کر دیا اور فوراً کام پر جُٹ گئے۔

کمپنی کے چیف ایگزیکٹیو لوک مارکلن ریاست ٹینیسی سے اپنے اس نئے ملازم کو دیکھنے کے لیے آئے۔

والٹر کے ساتھ کافی پینے کے بعد انھوں نے اپنی 2014 ماڈل کی فورڈ ایسکیپ گاڑی ان کے حوالے کر دی۔

والٹر نے پیر کے روز نامہ نگاروں کو بتایا کہ 'یہ میری پہلی نوکری ہے، اور میں انھیں دکھانا چاہتا تھا کہ میرے اندر جذبہ ہے۔ میں سوچا کہ جیسے بھی ہو، میں کام کر دکھاؤں گا۔'

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں