کتوں کو بھی جوتے پہنائیں: سوئس پولیس

سوئٹزر لینڈ تصویر کے کاپی رائٹ STADTPOLIZEI ZÜRICH

اطلاعات کے مطابق سوئٹزر لینڈ کے شہر زیورخ کی پولیس نے کتوں کے مالکوں سے کہا ہے کہ وہ شدید گرم موسم کے باعث اپنے کتوں کے پنجوں کو محفوظ رکھنے کے لیے انھیں جوتے پہنائیں۔

سرکاری براڈکاسٹر ایس آر ایف کے مطابق زیورخ میں پولیس نے ’ہاٹ ڈاگ کیمپین‘ شروع کی ہے اور وہ کتوں کے مالکان کو بتا رہے ہیں کہ وہ کیسے اپنے جانوروں کو اس گرم موسم میں محفوظ رکھ سکتے ہیں۔ ان مالکان کو بتایا گیا ہے کہ اس موسم میں ان جانوروں کے لیے سڑکوں پر گھومنا تکلیف دہ ہو سکتا ہے۔

سوئس انفو نیوز ویب سائٹ کی رپورٹ کے مطابق یورپ میں حالیہ ہیٹ ویو کی وجہ سے سوئٹزرلینڈ میں سنہ 1864 کے بعد سب سے شدید گرمی پڑ رہی ہے۔ سوئٹزرلینڈ میں اس وقت درجۂ حرارت 30 سیلسیئس تک پہنچ گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیے

یورپ شدید ترین گرمی کا نیا ریکارڈ قائم ہونے کا خدشہ

کینیڈا میں شدید گرمی، ہیٹ ویو سے 33 افراد ہلاک

نیوزی لینڈ کی ’بلیِ اوّل‘

زیورخ پولیس کے ترجمان مائیکل والکر کے مطابق زمین پر چلتے ہوئے 30 ڈگری 50 سے 55 ڈگری کے برابر محسوس ہوتا ہے اور اس کی وجہ سے کتوں کو کافی تکلیف ہو سکتی ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ STADTPOLIZEI ZÜRICH

انھوں ایس آر ایف کو بتایا: ’جب کتا گرم تپتی سڑک پر چلتا ہے تو وہ اس کے پیر جل سکتے ہیں، بالکل ویسے ہی جیسے انسان اگر ننگے پیر چلے۔‘

زیورخ سٹی پولیس نے مشورہ دیا ہے کہ اپنے کتوں کو گھر سے باہر لے جانے سے قبل اس بات کا اطمینان کر لیا جائے کہ زمین بہت زیادہ گرم تو نہیں۔

اس کے علاوہ پولیس کی جانب سے پالتو جانوروں کے مالکان سے یہ بھی کہا گیا ہے کہ وہ اپنے جانوروں کو گرم گاڑیوں میں چھوڑ کر نہ جائیں اور اس بات کو یقینی بنائیں کہ ان کے لیے پینے کا پانی وافر مقدار میں موجود ہو۔

فیس بک صفحے پر ان کی جانب سے لکھا گیا: ’کیا باہر بہت گرمی ہے؟ تو پھر ان راستوں یا سڑکوں پر نہ جائیں جہاں دھوپ زیادہ ہے، اپنے بڑے کتوں کو ’جوتے‘ پہنائیں اور چھوٹوں کو گود میں اٹھائیں۔‘

اس مہم کو سینکڑوں فیس بک صارفین نے سراہا ہے۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں