برازیل: کیچڑ کے سیلاب میں سینکڑوں افراد لاپتہ، تصاویر

جنوبی مشرقی برازیل میں خام لوہے کی کان پر ڈیم ٹوٹنے سے بڑے پیمانے پر عمارات اور سڑکیں تباہ ہوگئیں۔

ویل کمپنی کمپلیکس تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

. ویل نامی برازیل کی سب سے بڑی کان کئ کی کمپنی نے جمعے کو بتایا کہ خدشہ ہے کہ بہت سے لوگ لاپتہ ہیں یا ان کی اموات واقع ہوچُکی ہے۔

تین سال قبل ویل اور بی ایچ پی بِیلیٹن کی ہی ملکیت والا ڈیم گر گیاتھا ۔ تصویر کے کاپی رائٹ Huw Evans picture agency

اس موجودہ حادثے کے تین سال قبل ویل اور بی ایچ پی بِیلیٹن کی ہی ملکیت والا ڈیم گر گیاتھا جس سے میناس گیریس میں 19 لوگ کی موت واقع ہو گئی تھی۔ یہ واقعہ برازیل کی تاریخ کا سب سے بھیانک ماحولیاتی حادثہ تھا۔

ریسکیو کا کام ٹیم گرنے کے بعد جاری ہے۔ تصویر کے کاپی رائٹ AFP

ریسکیو ٹیموں کے ترجمان کا کہنا تہا کہ اعلاقے کے متاثرہ افراد کو محفوظ مقام پر پہنچا دیا گیا ہے۔

نمائندگان کا کہنا تھا کہ کان سے خارج ہونے والے فاضل مادے نے بروماڈینہو کے مضافات میں پائے جانے والی وِلا فورٹیکو کی آبادی کو بُری طرح متاثر کیا ہے تصویر کے کاپی رائٹ Reuters

نمائندگان کا کہنا تھا کہ کان سے خارج ہونے والے فاضل مادے نے بروماڈینہو کے مضافات میں پائے جانے والی وِلا فورٹیکو کی آبادی کو بُری طرح متاثر کیا ہے

برازیل کے ماحولیاتی وزیر اور وفاقی سیکریٹری برائے سِول دفاع نے متاثرہ علاقے کا دورہ کیا اور صدر جئیر بولسونارو ہفتے کے روز جگہ کا دورہ کریں گے۔ تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption برازیل کے ماحولیاتی وزیر اور وفاقی سیکریٹری برائے سِول دفاع نے متاثرہ علاقے کا دورہ کیا اور صدر جئیر بولسونارو ہفتے کے روز جگہ کا دورہ کریں گے۔

برازیل کے ماحولیاتی وزیر اور وفاقی سیکریٹری برائے سِول دفاع نے متاثرہ علاقے کا دورہ کیا اور صدر جیئر بولسونارو ہفتے کے روز جائے حادثہ کا دورہ کریں گے۔

متعلقہ عنوانات