فنگر ہالکن: بویریا میں ’انگلی توڑ‘ جرمن کشتی کے مقابلے، تصاویر میں

Competitors face off in the German Finger Wrestling (Fingerhakeln) Championships in Garmisch-Partenkirchen, southern Germany, 15 August 2019 تصویر کے کاپی رائٹ EPA

آپ نے یقیناً لوگوں کو انگلیوں پر نچانے والا محاورہ تو سنا ہی ہوگا، لیکن کیا آپ نے کبھی انگلیوں کی کشتی کے بارے میں سنا ہے؟

یہ عجیب و غریب مقابلہ جرمنی کے علاقے بویریا میں ایک مقبول کھیل ہے اور اسے مقامی زبان میں ’فنگر ہالکن‘ یا جرمن فنگر ریسلنگ کہا جاتا ہے۔

فنگر ہالکن کے مقابلوں میں کشتی یا باکسنگ کی طرح کھلاڑیوں کو ان کی عمر، حجم اور وزن کے مطابق مختلف کیٹیگوریز میں ڈالا جاتا ہے اور ایک ہی کیٹیگوری کے دو کھلاڑیوں کا آپس میں میچ ہوتا ہے۔

Competitors face off in the German Finger Wrestling (Fingerhakeln) Championships in Garmisch-Partenkirchen, southern Germany, 15 August 2019 تصویر کے کاپی رائٹ EPA

دونوں حریف ایک میز پر آمنے سامنے بیٹھتے ہیں اور ان کے ہاتھوں کی ایک ایک انگلی کو چمڑے کے سٹریپ سے جوڑ دیا جاتا ہے۔

کھلاڑی اپنی کسی بھی ایک انگلی میں سٹریپ پہن سکتے ہیں۔

فاتح وہ ہوتا ہے جو اپنے حریف کو صرف اپنی انگلی کے زور سے ٹیبل سے نیچے گرا دے یا اپنی جانب کھینچ لے!

Competitors face off in the German Finger Wrestling (Fingerhakeln) Championships in Garmisch-Partenkirchen, southern Germany, 15 August 2019 تصویر کے کاپی رائٹ EPA

رواں ہفتے اس کھیل کی 60ویں سالانہ چیمپیئن شپ جنوبی جرمنی میں منعقد ہوئی۔

Competitors face off in the German Finger Wrestling (Fingerhakeln) Championships in Garmisch-Partenkirchen, southern Germany, 15 August 2019 تصویر کے کاپی رائٹ EPA
A referee supervises competitors in the German Finger Wrestling (Fingerhakeln) Championships in Garmisch-Partenkirchen, southern Germany, 15 August 2019 تصویر کے کاپی رائٹ EPA

مختلف اقسام کی کشتی کی طرح فنگر ہالکن میں حصہ لینے والے کھلاڑیوں کو بھی سخت ٹرینگ کرنا ہوتی ہے۔

ٹینس کی گیندوں کو دبانا اور انگلیوں میں بھاری وزن ڈالنا اس کھلاڑیوں کی تربیت کا حصہ ہوتا ہے۔ اس کھیل میں کامیابی کے لیے ضروری ہے کہ آپ میں بےتحاشہ درد سہنے کی صلاحیت ہو!

Competitors warm up for the German Finger Wrestling (Fingerhakeln) Championships in Garmisch-Partenkirchen, southern Germany, 15 August 2019 تصویر کے کاپی رائٹ EPA
Children watch competitors face off in the German Finger Wrestling (Fingerhakeln) Championships in Garmisch-Partenkirchen, southern Germany, 15 August 2019 تصویر کے کاپی رائٹ EPA

بظاہر سیدھا سادھا یہ کھیل خطرے سے خالی نہیں اور کھلاڑیاکثر کٹ، فریکچر یا رگڑ لگنے سے زخمی ہو جاتے ہیں یا ان کی انگلینں ٹوٹ جاتی ہیں۔

اس کھیل کی تاریخ کے بارے میں کوئی ٹھوس شواہد نہیں ہیں اور خیال کیا جاتا ہے یہ بویریا اور آسٹریا میں ایجاد ہوا۔ تاریخ دان سمجھتے ہیں کہ اسے جھگڑوں کا حل تلاش کرنے کے لیے ایجاد کیا گیا تھا۔

۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں